Saturday , June 23 2018
Home / جرائم و حادثات / شی ٹیم کی مداخلت، کمسن لڑکیوں کی شادیاں روک دی گئیں

شی ٹیم کی مداخلت، کمسن لڑکیوں کی شادیاں روک دی گئیں

حیدرآباد۔ 11 مارچ (پی ٹی آئی) رچہ کنڈہ پولیس کی شی ٹیمس نے نابالغ لڑکیوں کی دو شادیوں کو آج روکتے ہوئے 15 اور 16 سال کی لڑکیوں کو کمسنی میں شادی سے بچا لیا۔ پولیس نے کہا کہ باوثوق ذرائع سے اطلاع ملنے پر شی ٹیمس چوٹ اپل اور بھونگیر علاقوں میں واقع ان لڑکیوں کے گھروں کو پہونچیں جہاں 25 اور 27 سال کے افراد سے ان کی شادیاں کی جارہی تھیں۔ رچہ کنڈہ پولیس کمشنر مہیش ایم بھاگوت نے کہا کہ شی ٹیم کے ذمہ داروں نے ان لڑکیوں کے ماں باپ سے بات چیت کرتے ہوئے ان کی کونسلنگ کے دوران کمسن لڑکیوں کی شادیاں روکنے کی ترغیب دی اور ان لڑکیوں کو بچپن میں کی جانے والی غیرقانونی شادیوں سے بچا لیا۔ کمشنر بھاگوت نے کہا کہ رچہ کنڈہ کمشنریٹ حدود میں شی ٹیمس نے 11 ماہ کے دوران کم سے کم 30 کمسن لڑکیوں کی شادیوں کو رکوا دیا جن کی عمر 14 تا 17 سال کے درمیان تھی۔ ان میں اکثر کمسن دلہنیں طالبات تھیں اور ان کے گھروں پر شادیاں انجام دی جارہی تھیں۔ ان خواتین اور لڑکیوں کے لئے تحفظ و سلامتی کے ماحول سے متعلق حکومت تلنگانہ کے ویژن کو ملحوظ رکھتے ہوئے شی ٹیمس تشکیل دی گئی تھیں۔

TOPPOPULARRECENT