Wednesday , December 19 2018

صحتمند تلنگانہ کی تشکیل کے لیے مختلف طبی اسکیمات

وزیر صحت لکشما ریڈی کا دعویٰ، اگسٹ میں آنکھوں کے معائنہ کی اسکیم
حیدرآباد۔/8 جون، ( سیاست نیوز) وزیر صحت ڈاکٹر لکشما ریڈی نے کہا کہ حکومت صحت مند تلنگانہ کی تشکیل کیلئے مختلف اسکیمات کا آغاز کرچکی ہے۔ عوام کو بہتر طبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے شہری اور دیہی علاقوں کے سرکاری دواخانوں میں نئی خدمات کا آغاز کیا گیا ہے۔ وزیر صحت نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ جنہوں نے سنہرے تلنگانہ کی تشکیل کی سمت پیشرفت کی ہے وہ عوام کو بہتر طبی سہولتوں کی فراہمی کے خواہاں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ تحریک سے وابستہ کے سی آر کا چیف منسٹر کے عہدہ پر فائز ہونا ریاست کیلئے اچھی علامت ہے۔ انہوں نے کہاکہ مخالفین تلنگانہ دعویٰ کررہے تھے کہ نئی ریاست کے قیام کے بعد پسماندگی میں اضافہ ہوگا لیکن آج ریاست مختلف شعبوں میں ترقی کرتے ہوئے ملک میں سرفہرست مقام حاصل کرچکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ترقی، فلاح و بہبود ، تعلیم اور صحت کے شعبہ میں نمایاں ترقی حاصل ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ عوام کو بہتر طبی سہولتوںکی فراہمی کے ذریعہ ریاست کو بیماریوں سے پاک اور صحتمند تلنگانہ بنانا حکومت کا مقصد ہے۔ پرائمری ہیلت سنٹرس سے سوپر اسپیشالیٹی ہاسپٹل تک اہم تبدیلیاں کی گئیں۔ نئے شعبہ جات کا آغاز کرتے ہوئے ماہر ڈاکٹرس کا تقرر کیا گیا۔ سرکاری دواخانوں میں عصری آلات کی تنصیب عمل میں آئی ہے تاکہ غریبوں کو مفت علاج کی سہولت حاصل رہے ۔ انہوں نے حاملہ خواتین کیلئے شروع کردہ کے سی آر کٹ اسکیم کی مقبولیت کا حوالہ دیا اور کہا کہ اس اسکیم کے تحت خواتین کو صحت سے متعلق تمام ضروری اشیاء سربراہ کی جارہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سابق میں کسی بھی حکومت نے عوام کی فلاح و بہبود کے بارے میں اس قدر توجہ نہیں دی۔ سابق حکمرانوں نے عوام کی بھلائی سے زیادہ ہمیشہ اپنے شخصی فائدہ پر توجہ مرکوزکی۔ برخلاف اس کے تلنگانہ حکومت عوام کے جذبات کو ملحوظ رکھتے ہوئے بھلائی کے اقدامات کررہی ہے۔ خواتین اور بیواؤں میں وظائف، شادی مبارک اور کلیان لکشمی جیسی اسکیمات سے لاکھوں خاندانوں کو فائدہ حاصل ہوا ہے۔ کسانوں کیلئے رعیتو بندھو اسکیم کے ذریعہ فصل بونے کیلئے فی ایکر 8 ہزار کی امداد جاری کی گئی۔ کسانوں کیلئے 5 لاکھ روپئے انشورنس کا اعلان کیا گیا ہے۔ زرعی شعبہ کو 24 گھنٹے بلاوقفہ برقی کی سربراہی کے سی آر حکومت کا کارنامہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسان کی موت چاہے کسی وجہ سے ہو ان کے پسماندگان کو اندرون دس یوم 5 لاکھ روپئے انشورنس کی رقم حاصل ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ ریاست بھر میں عوام کی آنکھوں کا معائنہ کیا جائے گا۔ اس اسکیم کا اگسٹ میں آغاز ہوگا۔ حکومت ہر گھر میں صحت سے متعلق معائنوں کا منصوبہ رکھتی ہے۔ لکشما ریڈی نے کہا کہ مشن بھگیرتا، مشن کاکتیہ اور ہریتا ہارم جیسی اسکیمات سے ریاست کو سرسبز و شاداب بنانے کی سمت پیشقدمی کی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT