Monday , November 20 2017
Home / Top Stories / صدارتی امیدوار پر اپوزیشن سے بھی مشاورت کریں گے

صدارتی امیدوار پر اپوزیشن سے بھی مشاورت کریں گے

این ڈی اے نے ابھی کسی نام کو قطعیت نہیں دی ہے، امیت شاہ کا بیان

نئی دہلی 27 مئی (سیاست ڈاٹ کام) صدر بی جے پی امیت شاہ نے آج کہاکہ اُن کی پارٹی اپوزیشن جماعتوں سے اعلیٰ ترین دستوری عہدے کیلئے برسر اقتدار اتحاد کے انتخاب کا فیصلہ کرنے سے قبل مشاورت کرے گی جو مشترک صدارتی امیدوار کے موضوع پر اتحاد بنانے کی کوششوں میں مصروف ہے۔ تاہم اُنھوں نے اِس سوال کو ٹال دیا کہ آیا بی جے پی اپوزیشن کے ساتھ ات فاق رائے استوار کرنے کی کوشش کرے گی۔ وہ نیوز ایجنسی پی ٹی آئی کے ساتھ بات چیت کررہے تھے۔ اُنھوں نے کہاکہ اتفاق رائے ایک اصطلاح ہے جو کئی طریقوں سے استعمال میں آتی ہے لیکن ہم اپوزیشن پارٹیوں کے بشمول ہر کسی کے ساتھ تبادلہ خیال کریں گے۔ مختلف پارٹیوں جیسے کانگریس، ممتا بنرجی زیرقیادت ٹی ایم سی اور بایاں بازو نے واضح کردیا ہے کہ اگر بی جے پی زیرقیادت این ڈی اے ہندوتوا رجحان والے کسی شخص کو نامزد کرتا ہے تو اپوزیشن سیکولر امیدوار کو انتخابی میدان میں پیش کرے گی۔ تاہم برسر اقتدار اتحاد ایسا ممکن نہیں لگتا کہ اپوزیشن پارٹیوں کے موقف کی پرواہ کرتا ہے کیوں کہ صدارتی الیکٹورل کالج میں اعداد و شمار اُس کے حق میں ہیں۔ امیت شاہ نے صدرجمہوریہ کے عہدہ کے لئے این ڈی اے کی طرف سے ممکنہ ناموں کے تعلق سے لب کشائی سے گریز کیا لیکن دعویٰ کیاکہ اُنھوں نے ابھی کسی کو بھی طے نہیں کیا ہے۔ اُن کا کہنا ہے کہ وہ پہلے این ڈی اے کے حلیفوں سے بات چیت کریں گے اور پھر اپوزیشن پارٹیوں سے بھی رابطہ ہوگا۔ صدارتی چناؤ کے لئے الیکٹورل کالج میں جملہ 11,04,546 ووٹ ہیں جس میں بی جے پی زیرقیادت این ڈی اے کی عددی طاقت موجودہ طور پر 5.38 لاکھ ووٹ ہیں۔ این ڈی اے نے اِس الیکٹورل کالج میں اکثریتی نشان کو تب عبور کرلیا جب جگن موہن ریڈی کی سربراہی والی آندھراپردیش کی پارٹی وائی ایس آر سی پی نے برسر اقتدار اتحاد کے لئے اپنی پارٹی کی تائید کا اعلان کیا اور تلنگانہ میں برسر اقتدار ٹی آر ایس نے اشارہ دیا ہے کہ وہ بھی ایسا ہی کرے گی۔ بی جے پی کو ٹاملناڈو میں برسر اقتدار آل انڈیا انا ڈی ایم کے پارٹی کے دونوں گروپوں کی تائید بھی حاصل ہونے کی اُمید ہے۔

صدارتی عہدہ کیلئے شردپوار پر اتفاق رائے ممکن : مرکزی وزیر
ناگپور ۔ 27 ۔ مئی : ( سیاست ڈاٹ کام ) : مرکزی وزیر رام داس اٹھاولے نے کہا کہ این سی پی لیڈر شردپوار اگر صدارتی امیدوار ہوں تو این ڈی اے جماعتوں میں اتفاق رائے ہوسکتا ہے ۔ مرکزی وزیر سماجی انصاف نے کہا کہ شردپوار ایک ذہین سیاستداں ہیں اور وہ ہارنے کے لیے مقابلہ نہیں کریں گے ۔ اگر وہ منتخب ہونا چاہتے ہیں تو انہیں این ڈی اے میں شامل ہونا چاہئے ۔ انہوں نے یہ تبصرہ ان اطلاعات کی پس منظر میں کیا کہ اپوزیشن کیمپ صدارتی عہدہ کے لیے شردپوار کو امیدوار بنانے پر غور کررہا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT