Monday , December 18 2017
Home / دنیا / صدر چین برطانیہ کے ساتھ مفاہمت کے خواہاں

صدر چین برطانیہ کے ساتھ مفاہمت کے خواہاں

بیجنگ، 8جولائی (سیاست ڈاٹ کام) چین کے صدر ژی جن پنگ نے برطانیہ کی وزیر اعظم تھریسا مے سے کہا ہے کہ دونوں ممالک کو ایک دوسرے کے اہم مفادات کا خیال رکھتے ہوئے اختلافات کو سلجھانے کی خاطر باہمی مفاہمت کی راہ ہموار کرنی چاہئے ۔ جن پنگ کا یہ بیان حال ہی میں ہانگ کانگ کے سلسلے میں تنازعہ کے بعد سامنے آیا ہے ۔ چین نے گزشتہ ماہ کہا تھا کہ ہانگ کانگ کے سلسلے میں دونوں ممالک کی 1997 میں جاری مشترکہ اعلامیہ اب محض تاریخی دستاویز ہے اور اس کی اب کوئی عملی اہمیت نہیں رہ گئی ہے۔
برطانیہ نے اس کے جواب میں کہا تھا کہ دونوں ممالک کے مابین جاری اعلامیہ قانونی طور پر ایک جائز معاہدہ ہے جسے قائم رکھنے کیلئے چین پابند ہے ۔ چین کا کہنا ہے کہ ہانگ کانگ چین کا داخلی معاملہ ہے اور کسی دوسرے ملک کو اس میں دخل دینے کا اختیار نہیں ہے ۔چین کے وزیر خارجہ نے آج کہاکہ دونوں رہنماؤں کی ملاقات G-20 سربراہ کانفرنس کے وقت جرمنی کے شہر ہمبرگ میں کل ہوئی۔ جن پنگ نے تھریسا مے سے کہا کہ ’’باہمی اعتماد کو مضبوط کرنے ‘‘کی بنیاد پر دوطرفہ روابط کو فروغ دیا جانا چاہئے ۔انہوں نے کہاکہ ’’دونوں فریقوں کو باہمی احترام اور برابری کے اصول کو برقرار رکھنا چاہئے اور ایک دوسرے کے اہم مفادات اور تشویش کا احترام کرنا چاہئے ‘‘۔

 

 

لاس اینجلس اور ہوسٹن ایر انڈیا کی راست پروازیں
واشنگٹن ۔8 جولائی ۔(سیاست ڈاٹ کام) ایئر انڈیا نے آج ایک اہم بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ کیلئے اپنی پروازوں میں لاس اینجلس اور ہوسٹن تک توسیع دینے کا منصوبہ بنایا جارہا ہے جبکہ صرف ایک روز قبل ہی نئی دہلی سے واشنگٹن کے لئے راست پرواز لانچ کی گئی ۔ ایئر انڈیا کے صدرنشین اور ایم ڈی اشونی لوہانی نے کل امریکہ او ہندوستان کے دارالخلافوں کے لئے راست نان اسٹاپ فلائیٹس کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم ایئرانڈیا کی منزلوں میں مزید دو شہروں کا اضافہ کرنا چاہتے ہیں اور وہ لاس اینجلس ہے اور ہوسٹن یا ڈلاس میں سے کوئی ایک ۔ لاس اینجلس کے لئے راست پرواز کے آغاز کی تاریخ کا تعین نہیں کیا گیا ۔ انھوں نے کہاکہ یہ تمام اقدامات ایئرانڈیا کی خدمات کو توسیع دینے کے منصوبہ کا حصہ ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT