Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / صنعتی شعبوں میں مسلمانوں کی حصہ داری وقت کی اہم ضرورت

صنعتی شعبوں میں مسلمانوں کی حصہ داری وقت کی اہم ضرورت

کتابچہ اسٹارٹ اپ انڈیا کا رسم اجراء، جناب اے کے خان کا خطاب
حیدرآباد۔13مارچ(سیاست نیوز) مسلم چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈائرکٹر جنرل محکمہ انسداد رشوت ستانی جناب اے کے خان نے کہاکہ صنعتی شعبہ میں مسلمانو ں کی حصہ داری وقت کی اہم ضرورت ہے اور حکومت تلنگانہ کی جانب سے بھی ایسے بہت سارے اقدامات کئے جارہے ہیں جس سے تعلیم یافتہ مسلم نوجوانوں کو انڈسٹری قائم کرنے کی راہیں ہموار ہورہی ہیں۔ ایم سی سی آئی کے زیراہتمام ناظم الدین فاروقی کے تیار کردہ مختصر معلوماتی کتابچہ اسٹارٹ اپ انڈیا کی رسم اجرائی کے بعد تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جناب اے کے خان نے کہاکہ چیف منسٹر ریاست کے صنعتی شعبے جات میںمسلمانوں بالخصوص مسلم نوجوانوں کو اگے لانے کے متعلق سنجیدگی کے ساتھ کام کررہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ انڈسٹری کے قیام کے لئے جہاں پر 35فیصد سبسڈی حکومت کی جانب سے فراہم کی جارہی ہے وہیںپر اراضی کے حصول میںبھی درپیش مشکلات کو آسان بنانے کاکام کیاجارہا ہے تاکہ ریاست کے مسلم سماج کوبھی دیگر طبقات کی طرح صنعتی شعبے میںاپنا مقام بنانے کاموقع فراہم کیاجاسکے۔ انہوںنے حالیہ عرصے میںچیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو کے ساتھ منعقد ایک جائزہ اجلاس میں کے سی آر کی جانب سے دئے گئے احکامات کاحوالہ دیتے ہوئے کہاکہ ہر اسمبلی حلقہ میںلڑکیوں اور لڑکوں کے لئے علیحدہ ریسڈینشیل اسکول قائم کرنے کے لئے چیف منسٹر نے احکامات جاری کئے ہیں اس کے علاوہ حکومت کی نئی انڈسٹری پالیسی کے تحت جہاںایس سی ‘ ایس ٹی کے لئے ٹی پرائیڈ اسکیم متعارف کروائی گئی ہے وہیںپرمینارٹیزکے لئے حکومت تلنگانہ ٹی پرائم اسکیم کانفاذ عمل میںلایا ہے۔ انہوں نے انڈسٹری کے قیام کے لئے سنگل ونڈو سسٹم کی بھی سہولت کا یقین دلایا۔ انہوں نے اسٹارٹ اپ انڈیاکتابچے کی ستائش کی اور ایم سی سی آئی کے ذمہ داران کو ایف پی پی سی سی ائی اور سی آئی آئی سے جڑکر کام کرنے کا بھی مشورہ دیا ۔جناب فرحت ابراہیم‘جناب منظور احمد جنرل سکریٹری ایم سی سی ائی کے علاو ہ غلام محمد چیرمن ایم سی سی ائی نے بھی  خطاب کیا۔

TOPPOPULARRECENT