Tuesday , December 18 2018

ضابطہ اخلاق سے حکومت کی کارکردگی غیرمتاثر:چدمبرم

نئی دہلی 5 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر فینانس پی چدمبرم نے کہاکہ ضابطہ اخلاق کے نفاذ سے مرکزی کابینہ اپنے فیصلے عائد کردہ حدود کے اندر کرنا جاری رکھے گی۔ حکومت کی کارکردگی انتخابات کے اعلان کے بعد رُک نہیں جائے گی۔ اُنھوں نے کہاکہ کابینہ کے اجلاس آخری وقت تک جاری رہیں گے۔ کابینہ پالیسیز کی بنیاد پر قبل ازیں کئے ہوئے فیصلوں کی من

نئی دہلی 5 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر فینانس پی چدمبرم نے کہاکہ ضابطہ اخلاق کے نفاذ سے مرکزی کابینہ اپنے فیصلے عائد کردہ حدود کے اندر کرنا جاری رکھے گی۔ حکومت کی کارکردگی انتخابات کے اعلان کے بعد رُک نہیں جائے گی۔ اُنھوں نے کہاکہ کابینہ کے اجلاس آخری وقت تک جاری رہیں گے۔ کابینہ پالیسیز کی بنیاد پر قبل ازیں کئے ہوئے فیصلوں کی منظوری دے گی۔ حکومت کی حسب معمول کارکردگی جاری رہے گی۔ اُنھوں نے کہاکہ الیکشن کمیشن نے چند تحدیدات عائد کی ہیں۔ ضابطہ اخلاق نافذ ہوچکا ہے لیکن ہم اِس بات کا خیال رکھیں گے کہ حکومت کی کارکردگی رُکنے نہ پائے۔ اُنھوں نے کہاکہ حکومت ضابطہ اخلاق کے نفاذ کے بعد کچھ کرسکتی ہے یا نہیں کرسکتی، اِس کے بارے میں غلط فہمیاں ہیں۔ وہ سرکاری بینکوں کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔ اُنھوں نے کہاکہ ضابطہ اخلاق کے نفاذ سے آر بی آئی کی جانب سے نئے بینکوں کو لائسنس کا اجراء متاثر نہیں ہوگا۔ فروغ راست غیرملکی سرمایہ کاری بورڈ جو بیرون ملک سرمایہ کاری کی تجاویز کو منظوری دیتا ہے، فیصلے کرنا جاری رکھے گا۔ حسب معمول کاروباری سرگرمی جاری رہے گی۔ فیفا کا آئندہ اجلاس کل مقرر ہے۔ الیکشن کمیشن نے کہا ہے کہ ضابطہ اخلاق حکومت اور سیاسی پارٹیوں دونوں کیلئے ہے۔

TOPPOPULARRECENT