Friday , September 21 2018
Home / ہندوستان / ضامن روزگار اسکیم کیلئے فنڈس کی اجرائی کا مطالبہ

ضامن روزگار اسکیم کیلئے فنڈس کی اجرائی کا مطالبہ

نئی دہلی ۔ 3 ۔ ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریسی ارکان نے آج یہ شکایت کی ہے کہ ضامن روزگار اسکیم کے تحت دیہاتوں میں مزدوروں کو ماہ مئی سے اجرتیں ادا نہیں کی جارہی ہے جس کے باعث تلاش روزگار کیلئے غریب عوام شہری علاقوں کو نقل مکانی پر مجبور ہور ہے ہیں ۔ انہوں نے حکومت سے فی افلور مداخلت کر کے اس رجحان کو روکنے کا مطالبہ کیا ہے ۔ لوک سبھا م یں

نئی دہلی ۔ 3 ۔ ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریسی ارکان نے آج یہ شکایت کی ہے کہ ضامن روزگار اسکیم کے تحت دیہاتوں میں مزدوروں کو ماہ مئی سے اجرتیں ادا نہیں کی جارہی ہے جس کے باعث تلاش روزگار کیلئے غریب عوام شہری علاقوں کو نقل مکانی پر مجبور ہور ہے ہیں ۔ انہوں نے حکومت سے فی افلور مداخلت کر کے اس رجحان کو روکنے کا مطالبہ کیا ہے ۔ لوک سبھا م یں وقفہ صفر کے دوران یہ مسئلہ اٹھاتے ہوئے رنجیت رنجن نے کہا کہ بہار کے علاقہ کوشی میں صورتحال اس قدر سنگین ہوگئی ہے کہ تقریباً 4 لاکھ دیہی غرباء ، تلاش معاش کیلئے شہروں کو منتقل ہوگئے ہیں ۔ قبل ازیں یہ تعداد 50 ہزار سے بھی کم تھی۔انہوں نے مہاتما گاندھی قومی ضامن روزگار اسکیم پر عمل آوری کیلئے زیادہ سے زیادہ فنڈس جاری کرنے پر زور دیا جبکہ کانگریس کے ایک اور رکن مسٹر رونیت سنگھ نے کہا کہ نیشنل ربیز کنٹرول پروگرام کیلئے خاطر خواہ فنڈ جاری کیا جائے کیونکہ کتے کاٹنے سے مرنے والوں کی تعداد سب سے زیادہ ہندوستان میں پائی جاتی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ سالانہ 30 ہزار افراد (Rabies) سے فوت ہورہے ہیں جس میں 35 فیصد ہندوستان کے ہیں ۔ مسٹر پی پی محمد فصل (کانگریس) نے طلباء کیلئے اسکالرشپس کی منظوری کے عمل میں تیزی پیدا کرنے کا مطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT