Tuesday , December 18 2018

ضلع بیدر سے وزراء کی عدم دلچسپی

منااکھیلی۔20مئی (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کرناٹک کی سدرامیا حکومت کے ایک سال مکمل ہونے پر بھی ضلع بیدر کادورہ کرنے والے وزرا ء کی تعداد ایک درجن تک نہیں پہنچتی ۔ جبکہ وزیراعلیٰ کرناٹک سدرامیا 4دفعہ بیدر کا دورہ کرچکے ہیں ۔ چونکہ ریاستی دارالخلافہ سے بیدر ضلع کی دوری کی بناپر یہ وزار بیدر نہیں آتے ہیں ۔ ان کے بیدر نہ آنے سے ضلع کے مسائل

منااکھیلی۔20مئی (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کرناٹک کی سدرامیا حکومت کے ایک سال مکمل ہونے پر بھی ضلع بیدر کادورہ کرنے والے وزرا ء کی تعداد ایک درجن تک نہیں پہنچتی ۔ جبکہ وزیراعلیٰ کرناٹک سدرامیا 4دفعہ بیدر کا دورہ کرچکے ہیں ۔ چونکہ ریاستی دارالخلافہ سے بیدر ضلع کی دوری کی بناپر یہ وزار بیدر نہیں آتے ہیں ۔ ان کے بیدر نہ آنے سے ضلع کے مسائل سے وزراء کو آگاہی نہیں ہوتی ۔ اب تک صرف14وزرا کے بیدر ضلع آنے کی خبرہے لیکن یہ وزراء بھی بیدرپارلیمانی انتخابات کے موقع پر آئے تھے ۔ مزید15وزراء نے بیدر کی طرف پلٹ کر نہیں دیکھا۔ خود نگران وزیر محترمہ اماشری فروری میں ہوئے ’’بیدراتسو ‘‘ کے موقع پر بیدر آئی تھیں اس کے بعد جس وقت این دھرم سنگھ نے اپنا پرچہ نامزدگی داخل کیاوہ تشہیر کے لئے کانگریس دفتر آئیں ۔ اور آج تک انھوں نے ضلع کی عوام کو اپنا چہرا نہیں دکھایا۔ جو وزراء بیدر آچکے ہیں ان میں وزیرداخلہ کے جے جارج ، دیہی ترقیات اور پنچایت راج کے وزیرایچ کے پاٹل ، وزیربرائے طبی تعلیم شرن پرکاش پاٹل، وزیربرائے صحت یوٹی قادر، ٹرانسپورٹ منسٹر رام لنگا ریڈی ، وزیرآبپاشی ایم بی پاٹل، ایگریکلچرل منسٹر شیام نور شنکرپا ، پی ڈبلیو ڈی منسٹر ایچ سی مہادیوپا ، کوآپریٹو منسٹر ایچ ایس مہادیو پرساد، بابو راؤ چنچنسور،وزیرزراعت کرشنا بیرے گوڈا، وزیربرائے اقلیتی بہبود قمرالاسلام ، اور وزیراطلاعات آرروشن بیگ نے ضلع کادورہ کیاہے۔ ان کے علاوہ باقی وزراء نے ضلع کادورہ ہی نہیں کیا۔ عوام نگران وزیرمحترمہ اُماشری اور دورہ نہ کرنے والے وزراء سے سخت نالاں ہیں ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT