Saturday , September 22 2018
Home / اضلاع کی خبریں / ضلع محبوب نگر میں کانگریس کو سب سے بڑی جماعت کا موقف

ضلع محبوب نگر میں کانگریس کو سب سے بڑی جماعت کا موقف

محبوب نگر14 مئی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) محبوب نگر ضلع کے 64 زیڈ پی ٹی سیز اور 982 ایم پی ٹی سیز کی نشستوں میں سے ایم پی ٹی سی کی 8 نشستوں پر امیدوار بلا مقابلہ منتخب ہوئے تھے ۔ منگل کی نصف شب تک بھی ووٹوں کی گنتی جاری رہی ۔ ضلع میں زیڈ پی ٹی سیز کی 28 نشستوں پر قبضہ کرتے ہوئے کانگریس نے سب سے بڑی جماعت کا موقف حاصل کرلیا ۔ جبکہ ٹی آر ایس نے بھی 24 ن

محبوب نگر14 مئی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) محبوب نگر ضلع کے 64 زیڈ پی ٹی سیز اور 982 ایم پی ٹی سیز کی نشستوں میں سے ایم پی ٹی سی کی 8 نشستوں پر امیدوار بلا مقابلہ منتخب ہوئے تھے ۔ منگل کی نصف شب تک بھی ووٹوں کی گنتی جاری رہی ۔ ضلع میں زیڈ پی ٹی سیز کی 28 نشستوں پر قبضہ کرتے ہوئے کانگریس نے سب سے بڑی جماعت کا موقف حاصل کرلیا ۔ جبکہ ٹی آر ایس نے بھی 24 نشستوں پر کامیابی حاصل کرکے دوسرا مقام حاصل کیا ۔ تلگودیشم نے 9 اور بی جے پی 2 زیڈ پی ٹی سیز پر کامیابی حاصل کی جبکہ زیڈ پی ٹی سی کی ایک نشست کولاپور کی رائے شماری ہائی کورٹ کی ہدایت پر روک دی گئی ۔ ضلع کے ایم پی ٹی سیز کے نتائج اس طرح ہیں ۔ کانگریس 363 ٹی آر ایس 300 ٹی ڈی پی 181 بی جے پی 54 سی پی ایم 4 سی پی آئی 3 آزاد 58 کا اعلان ہوچکا ہے ۔ ضلع کے بلدی انتخابات میں کانگریس کو فوقیت حاصل رہی ۔ لکن ایم پی ٹی سی اور زیڈ پی ٹی سی انتخابات میں ٹی آر ایس نے کانگریس کو برابر کا مقابلہ دیا ۔ جبکہ خلاف توقع تلگودیشم نے بھی بہتر مظاہرہ کیا ۔ تلگودیشم نے نارائن پیٹ اور کوڑنگل میں برتری حاصل کی جبکہ بی جے پی آمنگل اور نارائن پیٹ زیڈ پی ٹی سیز پر کامیاب رہی ۔ اس کے علاوہ 54 ایم پی ٹی سیز پر بھی اس نے کامیابی حاصل کی ۔ معلنہ نتائج کے بعد کانگریس کو ضلع پریشد چیرمین کی نشست حاصل کرنے کیلئے مزید 4 زیڈ پی ٹی سیز کی ضرورت ہے ۔ اب عوام کی مکمل توجہ 16 مئی کو ہونے والے اسمبلی اور لوک سبھا کے نتائج پر مرکوز ہوگئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT