Saturday , December 15 2018

ضلع محبوب نگر میں 80فیصد وقف جائیدادوں پر قبضے۔ سی پی آئی

محبوب نگر۔/22اکٹوبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ضلع محبوب نگر میں 80فیصد وقف جائیدادوں پر ناجائز قبضے ہیں۔ اس بات کا تذکرہ سی پی آئی کے سابق ایم پی اور انصاف کے صدر عزیز پاشاہ نے منگل کے دن ضلع سی پی آئی دفتر میں اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ ضلع میں 6000ایکر اراضی میں سے 4000 ایکر پرغیر مجاز قبضے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ اوق

محبوب نگر۔/22اکٹوبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ضلع محبوب نگر میں 80فیصد وقف جائیدادوں پر ناجائز قبضے ہیں۔ اس بات کا تذکرہ سی پی آئی کے سابق ایم پی اور انصاف کے صدر عزیز پاشاہ نے منگل کے دن ضلع سی پی آئی دفتر میں اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ ضلع میں 6000ایکر اراضی میں سے 4000 ایکر پرغیر مجاز قبضے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ اوقافی جائیدادوں کو عدالت کے ذریعہ واپس حاصل کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وقف قانون کے تحت ٹریبونل کے جو فیصلے ہوتے ہیں آر ڈی اوز اس پر عمل کریں۔ عمل نہ ہونے کی وجہ سے ہی ہزاروں ایکر اراضی پر ناجائز قبضے ہورہے ہیں۔ انہوں نے حیدرآباد، وشاکھاپٹنم کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ یہاں لاکھوں ایکر اراضی پر بڑے بڑے صنعت کار اپنا قبضہ جمائے ہوئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ صرف مستقر محبوب نگر پر ہی 153 ایکر وقف اراضی پر ناجائز قبضے ہیں۔ انہوں نے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ ضلع میں ٹاسک فورس کے ذریعہ دھاوے کرتے ہوئے وقف اراضی کو غیر مجاز قبضوں سے آزاد کروایا جائے۔ اس ضمن میں انہوں نے ضلع کلکٹر کو ایک یادداشت پیش کی۔ پریس کانفرنس میں جناب سید عبدالقادر ( انصاف ) کے علاوہ حیدر پاشاہ، عبدالعزیز، حمید حسین، خواجہ نجم الدین، احمد حسین، افضل، سی پی آئی کے ضلع سکریٹری اے نرسمہا و دیگر قائدین موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT