Wednesday , June 20 2018
Home / شہر کی خبریں / ضمنی انتخابات میں کانگریس کا مظاہرہ، بی جے پی کے زوال کی ابتدا

ضمنی انتخابات میں کانگریس کا مظاہرہ، بی جے پی کے زوال کی ابتدا

4 ماہ میں اعتماد سے محروم حکومت کے اچھے دن ختم: رکن راجیہ سبھا ایم اے خان

4 ماہ میں اعتماد سے محروم حکومت کے اچھے دن ختم: رکن راجیہ سبھا ایم اے خان
حیدرآباد /16 ستمبر (سیاست نیوز) کانگریس کے رکن راجیہ سبھا ایم اے خان نے دس ریاستوں کے 3 لوک سبھا اور 33 اسمبلی حلقوں کے ضمنی انتخابات میں کانگریس کے شاندار مظاہرہ کو بی جے پی کے زوال کی ابتدا قرار دیا اور مسلمانوں کے خلاف بی جے پی کی ’’لوجہاد تحریک‘‘ کو ناکام قرار دیا۔ انھوں نے کہا کہ مہاراشٹرا اور ہریانہ کے عام انتخابات سے قبل یہ نتائج اس بات کا ثبوت ہیں کہ بی جے پی اور نریندر مودی صرف 4 ماہ میں عوامی اعتماد سے محروم ہو چکے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس کی سب سے بڑی کامیابی یہ ہے کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی آبائی ریاست گجرات میں کانگریس نے تین اسمبلی حلقہ جات میں کامیابی حاصل کی ہے، جن پر پہلے بی جے پی کا قبضہ تھا۔ علاوہ ازیں راجستھان میں بی جے پی کو بہت بڑا دھکا لگا، جہاں بی جے پی کی حکومت ہے اور عام انتخابات میں 25 لوک سبھا حلقوں میں بی جے پی نے کامیابی حاصل کی تھی، تاہم 4 اسمبلی حلقوں کے ضمنی انتخابات میں کانگریس نے 3 حلقوں میں کامیابی درج کراتے ہوئے بی جے پی سے نشستیں چھین لیں۔ اسی طرح اتر پردیش کے 11 اسمبلی حلقہ جات میں سے 9 حلقوں میں سماج وادی پارٹی نے کامیابی حاصل کی اور بی جے پی صرف 2 حلقوں تک محدود رہی، جب کہ لوک سبھا انتخابات میں بی جے پی نے 71 لوک سبھا حلقوں میں کامیابی حاصل کی تھی۔ انھوں نے کہا کہ جس تیز رفتاری سے بی جے پی ابھری تھی، اسی طرح زوال پزیر بھی ہے۔ ملک کے عوام نے ’’اچھے دن‘‘ کا دھوکہ دینے والی بی جے پی کو سبق سکھاتے ہوئے ایک بار پھر سونیا گاندھی اور راہول گاندھی کی زیر قیادت کانگریس پر اپنے اعتماد کا اظہار کیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ نفرت کی سیاست کرنے والی بی جے پی چاروں شانے چت ہو گئی، جب کہ اس کی ’’لوجہاد مہم‘‘ کو عوام نے مسترد کردیا۔

TOPPOPULARRECENT