Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / ضیا گوڑہ میں عصری مسلخ تعمیر کرنے کا تیقن

ضیا گوڑہ میں عصری مسلخ تعمیر کرنے کا تیقن

تجاویز کے لیے کمیٹی کی تشکیل ، ویکر سیکشن میں ڈبل بیڈ روم کی تعمیر کا سنگ بنیاد
حیدرآباد۔26جولائی(سیاست نیوز) ریاستی وزیر برائے میونسپل انتظامیہ مسٹر کے ٹی راما رائو نے ضیا گوڑہ میںماڈرن مسلخ کی تعمیر کا اعلان کیا۔ انہو ںنے مقامی لوگوں کو مشورہ دیا کہ وہ اس ضمن میںایک کمیٹی تشکیل دیں جو مجوزہ مسلخ کے متعلق تجاویز تیار کرسکیں ۔ آج یہاں ضیا گوڑہ ویکرس سیکشن میں ڈبل بیڈروم مکانات کی تعمیر کا سنگ بنیاد رکھنے کے بعد عوام کی کثیرتعداد سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر کے ٹی راما رائو نے کہاکہ ضیا گوڑہ ویکرس سیکشن میں840ڈبل بیڈروم مکانات تعمیر کئے جائیں گے جہاں پر پہلے 540لوگوں کو مکانات فراہم کئے جائیںگے اس کے علاوہ ماباقی مکانات کمشنر بلدیہ کی نگرانی میں بذریعہ قرعہ اندازی ضرورت مند او ر غریب خاندانو ں میںتقسیم کئے جائیں گے۔کے ٹی آر نے عوام سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ وہ کسی بھی پیروکار کے جھانسے میںنہ آئیں۔ انہوں نے کہاکہ پیسوں کے عوض مکانات فراہم کرنے کا لالچ دینے والے آپ کو دھوکہ دے رہے ہیں۔ انہوں نے سخت الفاظ میںانتباہ دیتے ہوئے کہاکہ حکومت تلنگانہ پیروکاروں ‘ اور کسی بھی قسم کی بدعنوانی کو ہرگز برداشت نہیں کریگی ۔ مسٹر کے ٹی راما رائو نے کہاکہ مستحق اور ضرورت مندوں کو اپنا حق حاصل کرنے کے لئے کسی پیروکار کے مرہون منت ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ انہوں نے کہاکہ ایک سال کے وقفے میںجیاگوڑہ ڈبل بیڈروم مکانات کی تعمیرکاکام مکمل کرلیاجائے گا اور 15اگست سال 2018تک یہاں کے غریبوں کوڈبل بیڈروم مکانات میںمنتقل کردیاجائے گا۔انہوں نے کہاکہ ڈبل بیڈروم مکانات کی تعمیر میعاری انداز میںکی جارہی ہے ۔کے ٹی راما رائو نے کانگریس کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ کانگریس کے دور حکومت میںمختلف ناموں سے ہاوز اسکیم کی شروعات کی گئی مگر آج تک بہت سارے پراجکٹ جوں کے توں موقف میںہیں جبکہ گھر وں کی فراہمی کے نام پر عوام سے پیسے بھی حاصل کئے گئے ۔ انہوںنے کہاکہ کانگریس کے دور میںتعمیر کردہ مکانات صرف ایک رول پر مشتمل ہوتے تھے جہاں پر سارے خاندان کوایک ساتھ شب بسری کرنی پڑتی تھی مگر حکومت تلنگانہ نے ڈبل بیڈروم کے نظریہ کے تحت تعمیرات کی شروعات کی تاکہ والدین اور بچوں کے لئے علیحدہ آرام گاہ قائم کی جاسکے ۔مسٹر کے ٹی راما رائو نے کہاکہ حکومت تلنگانہ نہ صرف ڈبل بیڈروم اسکیم کی شروعات کی ہے بلکہ کلیانہ لکشمی او رشادی مبارک اسکیم کے تحت غریب لڑکیو ںکی شادی میںبلاتفریق مذہب ذات پات مالی امداد کی جارہی ہے ۔ غریب اور متوسط خاندان کے بچوں کو مفت تعلیم کی فراہمی کے لئے میناریٹی اقامتی اسکولس اور گروکل قائم کئے جارہے ہیں۔ غریبوں کو فی فرد چھ کیلو معیاری چاول فراہم کیاجارہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ عوام کی فلاح وبہبود حکومت تلنگانہ کی اولین ترجیحات میں شامل ہے ۔ ڈپٹی چیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو نے بھی عوام کی کثیرتعداد سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ تلنگانہ ہندوستان کی سب سے پہلے ریاست ہے جہاں بڑے پیمانے پر فلاحی کام انجام دئے جاتے ہیں۔ جناب محمد محمودعلی نے کہاکہ چیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو کو ہندوستان کے نمبر ایک چیف منسٹر کا اعزاز حاصل ہے ۔ انہوں نے ماڈرن مسلخ کی تعمیر کے اعلان کاخیر مقدم کرتے ہوئے عوام کو بھروسہ دلایا کہ کے ٹی آر کے اعلان کے مطابق 15اگست 2018تک ضیا گوڑہ میں ڈبل بیڈروم مکانات کی تعمیر کے کام کو تکمیل کرلیاجائے گا۔ ریاستی وزیر داخلہ این نرسمہا ریڈی نے کہاکہ ریاست میںترقی میںدرکار اصلاحات لانے کا اعزاز چیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو کو ہی ہے ۔ انہو ںنے کہاکہ کے سی آر نے گائوں گائوں گھوم کر عوام سے ملاقات کی اور انہیں اس بات کااحساس ہوا کہ ریاست تلنگانہ کی عوام کو اگر سب سے زیادہ ضرورت کسی چیز کی ہے تو وہ گھر ہے ۔نرسمہا ریڈی نے کہاکہ ڈبل بیڈروم مکانات اسکیم کے سی آر کی اسی سونچ کا نتیجہ ہے۔ انہوںنے کہاکہ حکومت تلنگانہ صرف گریٹر حیدرآباد حدود میںایک لاکھ مکانات کی تعمیر کے منصوبے پر کام کررہی ہے جس کو عملی جامہ پہنانے کے لئے ہمارے جواں سال وزیر کے ٹی رامارائو سرگرم عمل ہیں۔ مئیرگریٹر حیدرآباد بنتو رام موہن‘ کمشنر بلدیہ گریٹر حیدرآباد جناردھن ریڈی‘ متعلقہ کارپوریٹرس ‘ ایم اے وحید رکن تلنگانہ اسٹیٹ وقف بورڈ‘ ایم اے ذیشان ٹی آر ایس گریٹر حیدرآباد لیڈر کے علاوہ دیگر بھی اس موقع پر موجود تھے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT