Tuesday , June 19 2018
Home / دنیا / طالبان رہنماء آغا جان معتصم گھر میں نظر بند

طالبان رہنماء آغا جان معتصم گھر میں نظر بند

کابل۔20اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) افغان طالبان کے امن مذاکرات کار آغا جان معتصم کو متحدہ عرب امارات میں گھر میں نظر بند کر دیا گیا جس پر افغان حکومت نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ان کی فوری رہائی اور پابندیاں ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے۔ افغان ذرائع ابلاغ نے سرکاری عہدیداروں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ حامد کرزئی کی جانب سے اپنے عہدے سے سبکدو

کابل۔20اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) افغان طالبان کے امن مذاکرات کار آغا جان معتصم کو متحدہ عرب امارات میں گھر میں نظر بند کر دیا گیا جس پر افغان حکومت نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ان کی فوری رہائی اور پابندیاں ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے۔ افغان ذرائع ابلاغ نے سرکاری عہدیداروں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ حامد کرزئی کی جانب سے اپنے عہدے سے سبکدوش ہونے سے قبل امن کیلئے کی جانے والی کوششوں کے سلسلے میں مذاکراتی عمل شروع کیا گیا تھا اس سلسلے میں آغا جان معتصم جو1998 سے2001ء تک طالبان کے دور اقتدار میں وزیر خزانہ رہے طالبان کا امن مذاکراتی نمائندہ مقرر کیا گیا تھا جن کے بارے میں گذشتہ ایک ہفتے سے اطلاعات تھیں کہ وہ لاپتہ ہیں۔ افغان حکومت کے عہدیدار کا کہنا تھا کہ وہ دبئی میں افغان حکام اور طالبان کے اہم راہنمائوں کے درمیان فروری میں ملاقات کا انعقاد کروانے کے بعد سے لاپتہ تھے۔ معتصم جن کا طالبان کے اہم راہنمائوں میں بھی شمار ہوتا ہے

اور وہ افغان امن عمل کے اقدامات کے بھی حامی ہیں’ کے بارے میں معلوم ہوا ہے کہ انہیں متحدہ عرب امارات میں ان کے گھر میں نظر بند کر دیا گیا ہے۔ افغان اعلی امن کونسل نے بھی اس بات کی تصدیق کی ہے۔ ادھر افغان حکومت نے اس پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے متحدہ عرب امارات کے حکام سے درخواست کی ہے کہ وہ ان کی نظربندی اور ان پر عائد کی گئی پابندیوں کو فوری طور پر برخواست کرے۔ ادھر کابل میں موجود مغربی صیانتی ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ معتصم کو گھر میں نظر بند رکھا گیا ہے اور متحدہ عرب امارات انہیں افغانستان بدر کرنے پر غور کر رہا ہے تاہم فوری طور پر یہ واضح نہیں ہوسکا کہ معتصم کو ان کے گھر میں کیوں نظر بند کیا گیا اور ان کی گرفتاری کے پیچھے کون ہے جبکہ متحدہ عرب امارات کے عہدیداروںنے بھی اس بارے میں کسی قسم کا ردعمل ظاہر نہیں کیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT