Sunday , July 22 2018
Home / شہر کی خبریں / طالب علم کی کامیابی میں کوئسچن بینک نہایت مفید اور تناسب میں اضافہ کا باعث

طالب علم کی کامیابی میں کوئسچن بینک نہایت مفید اور تناسب میں اضافہ کا باعث

سیاست ایس ایس سی کوئسچن بینک کی رسم اجرائی ، پروفیسر مسعود احمد خاں ، احمد شبیر الدین فاروقی کی مخاطبت
حیدرآباد ۔ 18 ۔ جنوری : ( سیاست نیوز ) : ادارہ سیاست کے زیر اہتمام جو ایس ایس سی کے کوئسچن بینک مرتب کیے جاتے ہیں وہ نہ صرف طلبہ کے لیے کامیابی کا ضامن ہوتے ہیں ۔ بلکہ اس سے کامیابی کے تناسب میں اضافہ ہوتا ہے اور گذشتہ 17 برسوں سے پابندی کے ساتھ شائع ہونے کا سلسلہ جاری ہے ۔ جس کے لیے ادارہ سیاست اور جناب زاہد علی خاں قابل مبارک باد ہیں ۔ ان خیالات کا اظہار پروفیسر مسعود احمد خاں درشہوار ایجوکیشن سوسائٹی نے یہاں سیاست گولڈن جوبلی ہال میں کوئسچن بینک کی رسم اجرائی کرتے ہوئے کیا اور کہا کہ ادارہ سیاست نہ صرف گورنمنٹ اسکولس کے طلبہ کو بلکہ خانگی اسکولس کے طلبہ کو بھی مفت میں یہ کوئسچن بینک فراہم کرتے ہیں ۔ جب کہ یہ سہولتیں تمام طلبہ کے لیے ہونی چاہئے ۔ اس کے لیے ادارہ سیاست قابل مبارکباد ہے ۔ اس موقع پر مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کرتے ہوئے جناب ظفر اللہ فہیم ڈائرکٹر سنٹرل ہائی اسکول نے تقریر کرتے ہوئے کہا کہ انگلش میڈیم کے نتائج جہاں اچھے ہوتے ہیں وہیں اردو میڈیم کے نتائج میں کمی وجہ بچوں کی تحریر کمزور ہوتی ہے ۔ اردو میڈیم کے طلبہ کو مفید مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپنی رائٹنگ کو درست کریں ۔ احمد بشیر الدین فاروقی ریٹائرڈ ڈپٹی ایجوکیشنل آفیسر نے کوئسچن بینک کی تیاری میں تعاون کرنے والے تمام اساتذہ سے اظہار تشکر کرتے ہوئے کہا کہ گذشتہ 17 برسوں سے اشاعت کا سلسلہ جاری ہے اور اس کے لیے امتحان نقطہ نظر سے اہم سوالات اور مشقی سوالات کو شامل کیا جاتا ہے ۔ تلگو اور انگلش میڈیم کے بعد اردو میڈیم کے پانچ مضامین کے کوئسچن بینک کی اشاعت میں قدرے تاخیر ہوئی ۔ انہوں نے بالخصوص سابق ہیڈ ماسٹر خلیل قادری کے خدمات کی ستائش کی جنہوں نے ریٹائرڈمنٹ کے بعد بھی اپنی خدمات دئیے ہیں ۔ مسٹر منظور احمد نے اپنی تقریر میں ادارہ سیاست کے کیرئیر کونسلنگ کے حوالہ سے بتایا کہ پچھلے سال سے ایس ایس سی کے سات جی پی اے حاصل کرنے پر بھی ادارہ سیاست نے ایوارڈ اور میرٹ سرٹیفیکٹ عطا کئے ۔ ایم اے حمید نے خیر مقدم کرتے ہوئے نظامت کے فرائض انجام دئیے ۔ حافظ محمد سقیم کی قرات سے آغاز ہوا ۔ صفدریہ اسکول اور درشہوار اسکول کی طالبات نے نعت اور ترانہ پیش کیا ۔ شہر اور اضلاع کے بے شمار اسکولس کے ذمہ داران نے شرکت کی جس میں ڈاکٹر ناظم علی ، تمیز الدین ، خواجہ معین الدین شامل ہیں ۔ خواجہ علی شعیب نے شکریہ ادا کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT