Saturday , September 22 2018
Home / ہندوستان / طب یونانی میں تحقیقات اور ترقی کیلئے مختلف اقدامات

طب یونانی میں تحقیقات اور ترقی کیلئے مختلف اقدامات

نئی دہلی 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام )حکومت طب یونانی میں تحقیقات کی حوصلہ افزائی اور مہلک امراض کے سستا اور موثر علاج کو فروغ دینے کیلئے مختلف اقدامات کررہی ہے۔ مملکتی وزیر آیوش شریپد یسونائک نے آج راجیہ سبھا میں ایک تحریر جواب دیتے ہوئے کہا کہ وقت مقررہ میں تحقیقاتی پراجکٹس کی تکمیل کیلئے حکومت نے ایک ریسرچ پالیسی وضح کی ہے ۔ اور نامور

نئی دہلی 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام )حکومت طب یونانی میں تحقیقات کی حوصلہ افزائی اور مہلک امراض کے سستا اور موثر علاج کو فروغ دینے کیلئے مختلف اقدامات کررہی ہے۔ مملکتی وزیر آیوش شریپد یسونائک نے آج راجیہ سبھا میں ایک تحریر جواب دیتے ہوئے کہا کہ وقت مقررہ میں تحقیقاتی پراجکٹس کی تکمیل کیلئے حکومت نے ایک ریسرچ پالیسی وضح کی ہے ۔ اور نامور سائنسی اداروں اور AIMS نئی دہلی جیسے ایلوپیتھک ہاسپٹل کے تعاون سے طب یونانی کی تعلیمی اور تحقیقات پر توجہ مرکوز کی گئی ہے ۔ حکومت کے اقدامات پر روشنی ڈالتے ہوئے مسٹر نائک نے بتایا کہ غیر وبائی امراض جیسے ذیابیطیس ‘ہائپر ٹینشن اور دیگر حیات بخش ادویات سنٹرل کونسل فار ریسرچ ان یونانی میڈیسن کے تحت مختلف تحقیقاتی اداروں میں تجربات کے مراحل میں ہیں

انہوں نے کہا کہ طب یونانی میں مختلف تحقیقاتی پراجکٹ کو EMR اسکیم کے تحت مختلف سائنسی اداروں کے تحت کردیاگیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی تحقیقاتی ادارہ نے 10 امراض میں یونانی ادویات کے فارمولے کارآمد ہونے کی تصدیق کردی ہے ۔ ایک اور سوال کے جواب میں وزیر ایوش نے بتایا کہ بنگلور میں نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف یونانی میڈیسن (NIUM)قائم کیا گیا ہے تا کہ طب یونانی میں پوسٹ گریجویٹ کورس شروع کیا جاسکے جبکہ دیسی ساختہ ادویات بشمول یونانی کی تحقیق اور ترقی کیلئے نیشنل ایوش مش کا بھی آغاز کیا گیا جس کے باعث طب یونانی کو ایک نئی جہت عطا ہوئی اور طب یونانی میں تحقیقات کی حوصلہ افزائی کیلئے مرکزی وزارت نے گرانٹس فراہم کئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT