Thursday , November 15 2018
Home / شہر کی خبریں / طلبہ مسائل کی یکسوئی کی جدوجہد میں بھر پور تعاون کا پیشکش

طلبہ مسائل کی یکسوئی کی جدوجہد میں بھر پور تعاون کا پیشکش

مولانا سید طارق قادری اور مولانا سید عبدالقادر کا عثمانیہ طلبہ کے ساتھ اظہار یگانگت

مولانا سید طارق قادری اور مولانا سید عبدالقادر کا عثمانیہ طلبہ کے ساتھ اظہار یگانگت
حیدرآباد۔6جولائی(سیاست نیوز)عثمانیہ یونیورسٹی میںہاسٹل میس کے مسئلہ پر پسماندہ طبقات سے تعلق رکھنے والے طلبہ کی جاری زنجیری بھوک ہڑتال سے اظہار یگانگت کے لئے صدر ہیو من لائف اوکینگ سوسائٹی وجنرل سکریٹری صوفی اکیڈیمی مولانا سید طار ق قادری کی قیادت میں ایک وفد آج عثمانیہ یونیورسٹی کیمپس پہنچ کر طلبہ سے ملاقات کی اور طلبہ کے مسائل کے حل کے لئے کی جانے والی تمام کوششوں میں تعاون کا اعلان کیا۔مولانا حامد حسین شطاری‘ مولانا سید عبدالقادر قادری‘ مولانا حسین محمد قادری کے علاوہ دیگر شامل تھے۔ مولانا سید طار ق قادری نے کہاکہ ریاستی حکومت جشن تلنگانہ کے نام پر ایک سو کروڑ روپئے خرچ کرنے کے دعوے کررہی ہے جبکہ سات کروڑ روپئے کے بقایہ جات کی عدم ادائی کے سبب پسماندہ طبقات سے تعلق رکھنے والے عثمانیہ یونیورسٹی طلبہ کا ہاسٹل میس بند کردیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ حکومت تلنگانہ تعلیمی پلان کے متعلق وائیٹ پیپر کی اجرائی عمل میں لائے تاکہ طلبہ کی بے چینی کو دور کیاجاسکے۔ انہوں نے حکومت کی غیر واضح تعلیمی پالیسی اور ایس سی‘ ایس ٹی‘ بی سی ومیناریٹی طلبہ کے ساتھ معاندانہ رویہ پر برہمی کا اظہار کیا۔ عثمانیہ یونیورسٹی کے طلبہ تلنگانہ تحریک کی کامیابی کی ضمانت ہیں۔ انہوں نے مزید کہاکہ ہزاروں طلبہ نے تلنگانہ تحریک کی کامیابی کے لئے اپنی جانوں کی قربانی دیکر تلنگانہ تحریک کا پروان چڑھایاہے اور آج وہی طلبہ حکومت کی لاپرواہیوں کاشکا ر ہیں۔مولانا سید طارق قادری نے عثمانیہ یونیورسٹی کے بشمول ریاست کی دیگر یونیورسٹیز کی مخلوعہ جائیدادوں پر تقررات کے معاملے میںبھی حکومت کی سرد مہری ریاست تلنگانہ کے تعلیمی نظام کے لئے خطرہ ثابت ہوگی۔ انہوں نے حکومت تلنگانہ سے عثمانیہ یونیورسٹی ہاسٹل میس کی فی الفور بحالی عمل میں لاتے ہوئے پسماندہ طبقات سے تعلق رکھنے والے طلبہ کو راحت پہنچانے کامطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT