Saturday , December 16 2017
Home / ہندوستان / طلبہ کو باہمی تعاون کے جذبہ سے مسابقت کا مشورہ

طلبہ کو باہمی تعاون کے جذبہ سے مسابقت کا مشورہ

ایک دوسرے کی تہذیب سے واقفیت حاصل کریں ، کلااُتسو سے سمرتی ایرانی کا خطاب
نئی دہلی ۔ 8 ڈسمبر ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی وزیر فروغ انسانی وسائل سمرتی ایرانی نے ملک کے مختلف مقامات سے آئے طلبہ پر زور دیا کہ وہ مسابقت کے ساتھ ساتھ ایک دوسرے سے باہمی تعاون بھی کریں۔ انھوں نے نوجوانوں کو یہ بھی مشورہ دیا کہ دوسری تہذیب و ثقافت کو سیکھنے کی بھی کوشش کریں۔ سمرتی ایرانی آج 4 روزہ ’’کلا اُتسو‘‘ کے افتتاح کے بعد خطاب کررہی تھیں۔ انھوں نے کہاکہ یہاں موجود شرکاء مسابقتی جذبہ کے تحت جمع ہوئے ہیں۔ ان میں ہر ایک کا تعلق مختلف علاقوں سے ہے ۔ وہ ان تمام کو مشورہ دیتی ہیں کہ ایک دوسرے کو اپنے تاثرات سے واقف کرائیں۔ جس جذبہ سے وہ یہاں جمع ہوئے ہیں

اس کے جواب میں باہمی تعاون اور حب الوطنی کو فروغ دیں ۔ انھوں نے ٹاملناڈو کے طلبہ کی ٹیم کی خاص طورپر ستائش کی جس نے غیرمعمولی بارش اور سیلاب کے باوجود اس اُتسو میں حصہ لیا ہے ۔ مرکزی وزیر نے یہ تجویز بھی دی کہ طلبہ کو ایک دوسرے سے دوستی استوار کرتے ہوئے ایک دوسرے کی زبان اور تہذیب سیکھنا چاہئے ۔ اس کے ساتھ ساتھ وہ دیگر ریاستوں کے بارے میں اپنی معلومات میں اضافہ کریں۔ انھوں نے اس موقع پر اُتسو میں شریک طلبہ کے ساتھ سیلفی بھی لی ۔ سمرتی ایرانی نے صدرجمہوریہ پرنب مکرجی ، نائب صدرجمہوریہ حامد انصاری اور لوک سبھا اسپیکر سمترا مہاجن کا بھی شکریہ ادا کیا جنھوں نے بچوں سے ملاقات کی اور اُن کے ساتھ تبادلۂ خیال کیا ۔ ملک کے مختلف حصوں سے تقریباً 1400 اسکولی طلبہ یہاں جمع ہوئے ہیں۔ اس اُتسو کا عنوان ’’بیٹی بچاؤ ، بیٹی پڑھاؤ‘‘ دیا گیا ہے جو مرکز کی شروع کردہ ایک اسکیم ہے ۔ ابتدائی تین دن مختلف مقابلوں کا اہتمام کیا جائے گااور چوتھے دن اختتامی تقریب منعقد ہوگی ۔ سمرتی ایرانی نے بتایا کہ نوبل انعام یافتہ کیلاش ستیارتھی ، نامور کلاسیکل رقاص سونل مان سنگھ اور معروف مصنف رسکن بونڈ اختتامی تقریب میں حصہ لیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT