Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / طلبہ کی صلاحیتوں میں نکھار کی ضرورت

طلبہ کی صلاحیتوں میں نکھار کی ضرورت

اردو یونیورسٹی میں 15 روزہ آزادی 70‘ یاد کرو قربانی تقاریب کا تقسیمِ انعامات کے ساتھ اختتام
حیدرآباد، 24؍ اگست (پریس نوٹ) یونیورسٹی گرانٹس کمیشن (یو جی سی) اعلیٰ تعلیمی اداروں کو جب بھی کسی پروگرام کے انعقاد کی ہدایت دیتی ہے تو امید کرتی ہے کہ یہ ادارے پروگرام کا انعقاد کریں گے ۔ لیکن بسا اوقات ایسا نہیں ہوتا۔ کئی اداروں کو بار بار یاد دہانی کی جاتی ہے کہ وہ پروگرام کریں اور اپنی رپورٹ روانہ کریں۔ لیکن جب سے میں یہاں (اردو یونیورسٹی) آیا ہوں مجھے یہ دیکھ کر خوشی ہوتی ہے کہ وزارت انسانی وسائل ہو یا یونیورسٹی گرانٹس کمیشن دونوں کی ہدایات کو اُردو یونیورسٹی میں نہ صرف پورا کیا جاتا ہے بلکہ اس کی رپورٹ بھی روانہ کی جاتی ہے۔ ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر شکیل احمد، رجسٹرار مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی نے کل ’’آزادی 70 یاد کرو قربانی ‘‘ کے 15 روزہ پروگرامس کی اختتامی تقریب میں بحیثیت مہمانِ خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ کامیابی اسی کو حاصل ہوتی ہے جو اپنے دائرے سے آگے نکل کر زائد کام کرتا ہے۔ اس لیے طلبہ کو چاہئے کہ وہ اپنی تعلیمی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ زائد نصابی سرگرمیوں میں حصہ لیں۔ انہوں نے طلبہ کو مشورہ دیا کہ وہ اپنے دوستوں کو بھی زائد نصابی سرگرمیوں کی تحریک دلائیں تاکہ ان کی مخفی صلاحیتوں کو جلا ملے۔ ابتداء میں ڈاکٹر محمد فریاد، کو آرڈینیٹر پروگرام نے 15 روزہ تقاریب کی تفصیلی رپورٹ پیش کی۔ انہوں نے بطور خاص این ایس ایس والینٹرس کی ستائش کی اور کہا کہ ان کی درخواست پر والینٹرس نے رات 2 بجے تک بھی مختلف امور انجام دیئے۔ جناب انیس احسن اعظمی نے کہا کہ اردو یونیورسٹی کے طلبہ میں صلاحیتوں کی کمی نہیں ۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ انہیں مواقع فراہم کیے جائیں۔ یونیورسٹی اس بات کے لیے کوشاں ہے کہ طلبہ کو زیادہ سے زیادہ مواقع حاصل ہوں۔ اس موقع پر کمیٹی کے اراکین ڈاکٹر محمد یوسف خان، ڈاکٹر محمد مشاہد، ڈاکٹر اسرار اعالم، جناب وسیم پٹھان، جناب بھکشاپتی نے بھی خطاب کیا۔ اس کے علاوہ طلبہ نے بھی اپنے تاثرات پیش کیے۔ اس موقع پر 15 روزہ جشن کے دوران مختلف مقابلوں میں جو حب الوطنی کے موضوع پر منعقد کیے گئے نمایاں مظاہرہ کرنے والے طلبہ میں انعامات بھی تقسیم کئے گئے ۔

TOPPOPULARRECENT