Friday , July 20 2018
Home / شہر کی خبریں / ظرافت حیدرآبادی تہذیب کی پہچان ، تہذیب یافتہ قوم کی پہچان اس کی ہنسی کا معیار

ظرافت حیدرآبادی تہذیب کی پہچان ، تہذیب یافتہ قوم کی پہچان اس کی ہنسی کا معیار

زندہ دلان حیدرآباد کی ہفتہ /25 نومبر کو محفل لطیفہ اور کل ہند مزاحیہ مشاعرہ
حیدرآباد ۔ /22 نومبر (پریس نوٹ) کہتے ہیں ہجوم غم میں ہنسنے والے ہر طرح کے حالات کا مقابلہ کرسکتے ہیں ۔ زندہ دلان حیدرآباد کی تقریبات ظرافت کی اس روایت کی پاسبان ہیں ۔ ادارہ کی دو روزہ سالانہ تقاریب کا جمعہ /24 نومبر اور /25 نومبر کو انعقاد عمل میں آئے گا ۔ بروز جمعہ /24 نومبر کی شام 6 بجے تلگو یونیورسٹی آڈیٹوریم نامپلی میں ڈاکٹر محمد علی رفعت آئی اے ایس کی صدارت میں ادبی اجلاس سے تقاریب کا آغاز ہوگا ۔ جس میں ملک کے مایہ ناز طنز و مزاح نگار اپنے تازہ طنزیہ و مزاحیہ مضامین پیش کریں گے ۔ بروز ہفتہ /25 نومبر کو 11 بجے دن اسی مقام پر پروفیسر احمد اللہ خاں کی صدارت میں محفل لطیفہ کا انعقاد عمل میں آئے گا ۔ جس میں ممتاز و معروف لطیفہ گو حضرات اپنے تازہ لطیفوں کے ذریعے محفل کو زعفران زارکریں گے۔ اسی دن شام 7.30 بجے تلگو للت کلاتھورانم باغ عامہ نامپلی میں جناب زاہد علی خاں مدیر روزنامہ سیاست کی صدارت میں کل ہند مزاحیہ مشاعرہ منعقد ہوگا ۔ جناب شفیق الزماں آئی اے ایس اور جناب راجیو رتن آئی پی ایس ڈائرکٹر جنرل فائر سرویس بحیثیت مہمانان خصوصی اور پروفیسر ایس اے شکور مہمان اعزازی شرکت کریں گے ۔ مشاعرے میں عالمی شہرت یافتہ شعراء مسرز پاپولر میرٹھی ، نشتر امروہی (دہلی) ، مختار یوسفی (مالیگاؤں) ، اسد رضا (دہلی) ، چونچ گیاوی ، سلیم حسرت (دمام) کے علاوہ ممتاز میزبان شعراء مسرز مصطفی علی بیگ ، ڈاکٹر محمد علی رفعت ، شاہد عدیلی ، فرید سحر ، ڈاکٹر معین امر بمبو ، اقبال شانہ ، چچا پالموری ، ٹپیکل جگتیالی ، وحید پاشاہ قادری ، ڈاکٹر علیم خاں فلکی ، حامد سلیم (بیدر) اور وینو گوپال بھٹنڈ اپنا تازہ مزاحیہ کلام سنائیں گے ۔ ڈاکٹر معین امر بمبو کنوینر اور فیروز رشید ناظم مشاعرہ ہیں ۔ ان دو روزہ تقاریب کو نواب شاہ عالم خاں کے نام معنون کیا گیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT