Thursday , April 19 2018
Home / ہندوستان / عازمین حج کیلئے آزاد ادارہ قائم کرنے کی تجویز

عازمین حج کیلئے آزاد ادارہ قائم کرنے کی تجویز

نئی دہلی 5 فروری (سیاست ڈاٹ کام) عازمین حج کے لئے انتظامات کا جائزہ لینے ایک آزاد مسلم ادارہ کی تشکیل اور حکومتی کنٹرول والی حج کمیٹی کو ختم کردینے کی استدعا کے ساتھ ایک پی آئی ایل دہلی ہائیکورٹ میں داخل کی گئی ہے۔ مفاد عامہ کی اس عرضی میں مرکز کے حالیہ اعلامیہ کا حوالہ دیا گیا جس کے ذریعہ عازمین کو دی جانے والی سبسیڈی برخاست کردی گئی جس سے آنے اور جانے کے لئے سستی فلائٹس ہوا کرتی تھیں۔ چونکہ یہ سبسیڈی ختم کی جاچکی ہے، اِس لئے حکومتی کنٹرول والے پیانل کی کوئی ضرورت نہیں کہ متعلقہ اُمور کی نگرانی کرے اور حج کمیٹی ایکٹ 2002 ء بھی ختم کردیئے جانے کے لائق ہے۔ عرضی میں عدالت سے آزاد ادارے کے لئے منظوری کی استدعا کی گئی اور حج کمیٹی کو ختم کرنے پر بھی زور دیا گیا۔ یہ عرضی دہلی کے ایڈوکیٹ شاہد علی نے گزشتہ ہفتے داخل کی۔ مرکزی حکومت نے 1959 ء میں بمبئی اور جدہ کے درمیان فضائی سفر کے لئے سبسیڈی متعارف کی تھی۔ ایر انڈیا جو سرکاری ملکیتی ادارہ ہے اُس کی دیگر فلائٹس کو آنے والے برسوں میں جوڑا گیا۔ عرضی میں کہا گیا کہ یہ سوال کہ حکومت کو حج کمیٹی کے تمام اُمور کی نگرانی کرتے رہنا چاہئے، جو حج کے لئے درخواستیں طلب کرنے سے لے کر فریضۂ حج کی ادائیگی کے بعد حاجیوں کی واپسی تک ہوتے ہیں، یہ اہمیت اختیار کرگیا ہے کیوں کہ مرکز نے سبسیڈی برخاست کرتے ہوئے اپنا تعلق ختم کرلیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT