Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / عازمین حج کیلئے بہترین انتظامات کرنے حکومت تلنگانہ کے ممکنہ اقدامات

عازمین حج کیلئے بہترین انتظامات کرنے حکومت تلنگانہ کے ممکنہ اقدامات

تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی کا پہلا تربیتی اجتماع ، ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی و دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔ 15 مئی (پریس نوٹ) جناب محمد محمود علی ڈپٹی چیف منسٹر حکومت تلنگانہ نے تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی کے زیر اہتمام منتخب عازمین حج کے لئے منعقدہ پہلے تربیتی اجتماع کا افتتاح کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت تلنگانہ ریاست کے عازمین حج کو  تمام سہولتیں فراہم کرنے کے تمام ممکنہ اقدامات کررہی ہے اور چیف منسٹر جناب کے چندر شیکھر راؤ کو اس معاملہ میں گہری دلچسپی ہے۔  ہائی ٹیک گارڈن فنکشن ہال ‘ اولڈ ملک پیٹ نزد پانی کی ٹانکی‘ عقب ریس کورس گراؤنڈ منعقد  ہوا۔ انہوںنے کہا کہ گزشتہ سال ریاست تلنگانہ میںحج کیمپ کے انتظامات سارے ملک میں سب سے اچھے رہے۔ ایرانڈیا کی فلائیٹس بھی انتہائی وقت کی پابندی کے ساتھ چلائی گئیں۔ حکومت تلنگانہ کی مساعی کے نتیجہ میں گزشتہ سال تقریباً چھ سو حجاج کرام کو رباط میں مفت رہائش کے ساتھ مفت طعام او رمفت لانڈری کی سہولت فراہم کی گئی اور اس سال کوئی ایک ہزار عازمین کو یہ سہولت فراہم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے اور اس سلسلہ میں رمضان کے بعد وہ جدہ کا دورہ کریں گے۔جناب محمد محمود علی نے مزید کہا کہ سعودی عربیہ میں سابق مملکت حیدرآباد کی تعمیر کردہ چھ سات رباطیں تھیں جن کو توسیعی پروجیکٹ کے تحت حاصل کرلیا گیا کوشش کی جارہی ہے کہ ان میںسے دو تین  رباط کی متبادل جگہیں بھی حاصل ہوجائیں تو وہاں نئی عمارتیں تعمیر کی جائیں اس طرح آنے والے برسوں میں ریاست تلنگانہ کے تمام حجاج کرام کو مفت رہائش کی سہولت حاصل ہوسکے گی۔ انہوں نے کہا کہ آج کل سہولتوں کی وجہ سے سفر آسان ہوگیا لیکن مناسک حج کی ادائیگی مشکل ہوگئی ہے۔ریاستی حکومت نے مرکز سے ریاست کے لئے حج کوٹہ میں اضافہ کی کوشش کررہی ہے‘ اس تعلق سے وزیر خارجہ شریمتی سشما سوراج سے بھی نمائیندگی کی جاچکی ہے۔جناب سید عمر جلیل سکریٹری محکمہ اقلیتی بہبود نے کہا کہ انہیں سال 2000سے  ان کو کسی نہ کسی شکل میںعازمین حج کی خدمت کا موقعہ مل رہا ہے۔ انہو ںنے اپنے تجربات کی روشنی میں عازمین حج کو مفید مشورے دئے اور کہا کہ وہ اوقات کے صحیح استعمال پر توجہ دیں اور کوشش کریں کہ وہ ہر نماز کے موقعہ پر مسجد میں موجود رہیں۔ عازمین کرام یہ معلوم کرلیں کہ انکی رہائش گاہ سے مسجد جانے کا راستہ کتنے منٹ کا ہے۔  وہ اپنے ساتھ زیادہ سامان نہ لے جائیں‘ کھانے پینے میں احتیاط رکھیں۔ اور صحت کا خیال رکھیں۔اسپیشل آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے صدارت کی ۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی حجاج کرام کی ہر سال  بہترین انتظامات کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا  کہ اس سال ریاست بھر سے جملہ 17390درخواستیں وصول ہوئیں‘ جن میں سے 2204 عازمین کا محفوظ زمروں میں انتخاب ہوا ‘ جبکہ کوٹہ 2532کا تھا۔ گزشتہ سال تین بڑے سانحے پیش آئے اور تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی نے ملک بھر میں سب سے پہلے کنٹرول روم قائم کیا۔  اس سال ریاست کے عازمین حج دوسرے مرحلہ میں ماہ اگست کے دوسرے ہفتہ سے روانہ ہوں گے۔  انہوںنے کہا کہ  حج کو روانگی کے مرحلہ تک مسلسل تربیتی اجتماعات منعقد کئے جائیں گے اور اضلاع میں بھی ایسے کیمپ ہوں گے۔  مولانا اعظم علی صوفی  نے فضائیل و مناسک حج و عمرہ اور مولانا عبدالرشید طلحہ نے آداب زیارت مدینہ منورہ بیان کئے۔ حج کمیٹی ممبئی کے تربیت یافتہ ٹرینر جناب خواجہ نصیر ا لدین  نے سفر حج سے متعلق اہم امور اور ا نتظامات  اسکرین پر پیش کئے۔ حافظ صابر پاشاہ کی قرأت کلام پاک سے تربیتی کیمپ کا آغاز ہوا۔ مولانا حافظ انصار انور نے حمد  و نعت پیش کی۔ جناب عرفان شریف ‘ جناب ایم  اے رفیع قریشی  ( حج کمیٹی ) جناب محمد عبدالقدیر پروپرائیٹر ہائی ٹیک گارڈن فنکشن ہال و ذمہ داران محمد عبدالعزیز‘ ْ محمد عبدالمنان‘ محمد عبدالمبین‘ محمد ابراہیم‘ محمد عبدالمنیر اور دوسروں نے ا نتظامات کی نگرانی کی۔ الحاج محمد فاروق علی حسامی نے احرام باندھنے کا طریقہ سمجھایا اور اس کی شرائط بیان کیں۔ خاتون عازمین کے لئے خصوصی انتظامات کئے گئے تھے۔ جناب شیخ عبدالرحمان نے بھی خطاب کیا۔ دعا پر اجتماع  اختتام کو پہنچا۔

TOPPOPULARRECENT