Thursday , June 21 2018
Home / شہر کی خبریں / عالم اسلام کے امت مسلمہ کو درپیش چیلنجس، آپسی اختلافات اور مسلکی امتیاز کو ختم کرنے کا مشورہ

عالم اسلام کے امت مسلمہ کو درپیش چیلنجس، آپسی اختلافات اور مسلکی امتیاز کو ختم کرنے کا مشورہ

سالارجنگ میوزیم میں ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کا افتتاح، مولوی نظیراحمد سلامی رکن پارلیمان ایران، جناب زاہد علی خاں اور دیگر کا خطاب

سالارجنگ میوزیم میں ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کا افتتاح، مولوی نظیراحمد سلامی رکن پارلیمان ایران، جناب زاہد علی خاں اور دیگر کا خطاب
حیدرآباد ۔ 3 جنوری (سیاست نیوز) رکن پارلیمنٹ ایکسپرٹس کونسل اسلامک ریپبلک آف ایران مولوی نظیراحمد سلامی نے سارے عالم کے مسلمانوں پر زور دیا کہ وہ آپسی اختلافات اور مسلکی امتیاز کو بالائے طاق رکھتے ہوئے اللہ کی وحدانیت اور حضور صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی سنت اور سیرت طیبہ پر عمل پیرا ہوکر دین اسلام کی سربلندی کیلئے کمربستہ ہوجائیں تاکہ دورحاضر میں سارے عالم کے امت مسلمہ کو درپیش چیلنجس کا سامنا کرتے ہوئے دشمنان اسلام کے ناپاک عزائم کو ناکام بنایا جاسکے۔ مولوی نظیراحمد سلامی آج عید میلادالنبی ﷺ اور ہفتہ اتحاد کے موقع پر روزنامہ سیاست اور سالارجنگ میوزیم کے تعاون اشتراک سے احاطہ سالارجنگ میوزیم میں واقع نواب تراب علی خان بھون میں ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کے افتتاح کے موقع پر منعقدہ تقریب کو بحیثیت مہمان خصوصی مخاطب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ آج ساری دنیا میں موجود قدرتی وسائل جیسے پٹرول، ڈیزل، کیروسین کے علاوہ دیگر قیمتی معدنیات کے ذرائع پر اسلامی ممالک کا کنٹرول ہے اور دنیا کے اہم آبی گذرگاہیں اسلامی ممالک سے گذرتی ہیں اور تقریباً ذرائع پر کنٹرول اسلامی ممالک پر دارومدار کرتا ہے اس کے باوجود امت مسلمہ مخالف اسلام اور صیہونی طاقتوں کی سازشوں کا شکار ہے جس کے نتیجہ میں اسلام کے کاز اور اسلامی ممالک کو کافی نقصان پہنچ رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج ایرانی مملکت وحدت اسلامی کی جانب دعوت دینے کے عمل کو جاری رکھی ہوئی ہے جیسا کہ حضور صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے بھی اپنے دور میں دعوت دین اور وحدانیت کے مشن کو جاری رکھا تھا حتیٰ کہ حضور ﷺ نے مکہ مکرمہ سے مدینہ منورہ ہجرت کے دوران یہود اور نصاریٰ کو بھی وحدانیت کی دعوت دی تھی۔ انہوں نے مسلمانوں سے پرزور اپیل کی کہ وہ آپسی رنجشوں کو دور کرتے ہوئے آپس میں متحد ہوجائیں تاکہ دشمنان اسلام اور صیہونی طاقتوں کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جاسکے۔ انہوں نے ایران اسلامی خطاطی نمائش کے حیدرآباد میں منعقد کئے جانے پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے ایڈیٹر روزنامہ سیاست جناب زاہد علی خان اور ڈائرکٹر سالارجنگ میوزیم ڈاکٹر ناگیندر ریڈی سے اظہارتشکر کیا۔ اس موقع پر ایڈیٹر روزنامہ سیاست جناب زاہد علی خان نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ خطاطی ایک امانت ہے جس کو ہمیشہ زندہ رکھنے کی اشد ضرورت ہے اور خطاطی کی عالمی سطح پر قدر و منزلت ہے۔ انہوں نے حیدرآباد میں ایرانی اسلامی خطاطی کے انعقاد پر ایرانی آرٹسٹوں کا بھی خیرمقدم اور ستائش کرتے کہا کہ ایران میں آج بھی خطاطی زندہ ہے لیکن ہندوستان میں اس کی پذیرائی میں پیشرفت نہیں ہورہی ہے جسے حیدرآباد میں اسلامی خطاطی نمائش کو حال ہی میں روزنامہ سیاست کے تعاون سے منعقد کرتے ہوئے دوبارہ زندہ کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ سب سے پہلے انہوں نے 1974ء میں اپنے دورہ ایران کے موقع پر خطاطی کے 150 نمونے لے آئے تھے تاکہ قارئین سیاست اس سے استفادہ کریں۔ اس کے بعد حیدرآباد میں 3 مرتبہ اسلامی خطاطی نمائش کا اہتمام کیا گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ آج ساری دنیا میں اسلامی خطاطی کو اہمیت حاصل ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایرانی اسلامی خطاطی نمائش جو 3 تا 9 جنوری جاری رہے گی، جس سے عوام استفادہ کریں۔ انہوں نے ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کے قیام میں ڈائرکٹر سالارجنگ میوزیم ڈاکٹر ناگیندر ریڈی کے تعاون پر اظہارتشکر کیا۔ اس موقع پر قونصل جنرل ایران متعینہ حیدرآباد مسٹر حسن نوریان نے بھی مخاطب کرتے ہوئے ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کے انعقاد میں ایڈیٹر روزنامہ سیاست جناب زاہد علی خان کے تعاون کی بھرپور ستائش کرتے ہوئے ان سے اظہارتشکر کیا ہے۔ اس موقع پر رکن قانون ساز کونسل مسٹر محمد فاروق حسین نے مخاطب کرتے ہوئے ادارہ سیاست کے تعاون سے ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کے قیام پر اظہارمسرت کرتے ہوئے اس قسم کی اسلامی خطاطی نمائش کو اضلاع کی سطحوں تک توسیع دینے کی تجویز پیش کی۔ انہوں نے اسلامی خطاطی نمائش کو ضلع میدک کے سدی پیٹ میں منعقد کرنے کا پیشکش کرتے ہوئے ایڈیٹر جناب زاہد علی خان سے خواہش ظاہر کی۔ انہوں نے ریاست تلنگانہ کے 10 اضلاع تک اسلامی خطاطی نمائش کے قیام کی بھی تجویز پیش کی۔ ایرانین آرٹسٹ مسٹر احمد خوش حساب نے مخاطب کرتے ہوئے ایرانی اسلامی خطاطی میں ایران کا تاریخی پس منظر پر تفصیلی روشنی ڈالی۔ ڈائرکٹر سالارجنگ میوزیم ڈاکٹر ناگیندر ریڈی نے سالارجنگ میوزیم میں ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کے اہتمام کی ستائش کرتے ہوئے سالارجنگ میوزیم کی تاریخ کا مختصر خاکہ پیش کیا۔ اس موقع پر نیوز ایڈیٹر روزنامہ سیاست جناب عامر علی خان، منیجر روزنامہ سیاست جناب شجاعت علی، رکن راجیہ سبھا مسٹر ایم اے خان، مسٹر محمد خلیق الرحمن، سلطان قادری کے علاوہ دیگر قائدین کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ جلسہ کا آغاز قاری حسین توروگی اردخانی کی قرأت کلام پاک سے ہوا۔ ایرانین آرٹسٹ مسٹر سعید یزدان مہر نے نعت خوانی پیش کی۔ مسٹر میر احمد علی نے نظامت کے فرائض انجام دیئے اور شکریہ ادا کیا۔ اس موقع پر روزنامہ سیاست کے زیراہتمام جناب محمد علی الدین امتیاز کی ’’اندھیروں میں روشنی بکھیرنے والے طغرے‘‘ کی نمائش کا بھی اہتمام کیا گیا تھا۔ بعدازاں رکن پارلیمنٹ ایکسپرٹس کونسل اسلامک ریپبلک آف ایران مولوی نظیراحمد سلامی اور ایڈیٹر روزنامہ سیاست جناب زاہد علی خان نے ایرانی اسلامی خطاطی نمائش کا افتتاح انجام دیا۔

TOPPOPULARRECENT