Sunday , June 24 2018
Home / شہر کی خبریں / عام آدمی پارٹی احتجاج کرسکتی ہے حکومت نہیں

عام آدمی پارٹی احتجاج کرسکتی ہے حکومت نہیں

حیدرآباد 21 جنوری ( سیاست نیوز ) سینئر بی جے پی لیڈر مسٹر ایم وینکیا نائیڈو نے آج کہا کہ ان کی پارٹی بھی دہلی پولیس کو حکومت دہلی کے تحت لانے کی حامی ہے تاہم ان کے خیال میں اس مسئلہ پر مباحث کی ضرورت ہے اور یہ مسئلہ سڑکوں پر حل نہیں کیا جاسکتا ۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وینکیا نائیڈو نے کہا کہ چونکہ حکومت دہلی ہی ریاست کے شہریوں کی حفاظ

حیدرآباد 21 جنوری ( سیاست نیوز ) سینئر بی جے پی لیڈر مسٹر ایم وینکیا نائیڈو نے آج کہا کہ ان کی پارٹی بھی دہلی پولیس کو حکومت دہلی کے تحت لانے کی حامی ہے تاہم ان کے خیال میں اس مسئلہ پر مباحث کی ضرورت ہے اور یہ مسئلہ سڑکوں پر حل نہیں کیا جاسکتا ۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وینکیا نائیڈو نے کہا کہ چونکہ حکومت دہلی ہی ریاست کے شہریوں کی حفاظت کی ذمہ دار ہے اور وہی عوام کو جوابدہ بھی ہے ایسے میں پولیس کو دہلی حکومت کے تحت لانے کی تجویز بہتر ہے ۔ انہوں نے تاہم کہا کہ چونکہ دہلی ایک قومی دارالحکومت ہے اور وہاں مرکزی حکومت کے دفاتر کے علاوہ پارلیمنٹ اور بیرونی سفارتخانہ ہیں اس لئے اس تجویز پر مباحث کی ضرورت ہے ۔ یہ ایسا مسئلہ ہے جس کا فیصلہ سڑکوں پر نہیں ہوسکتا ۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم ‘ وزرا ‘ پارلیمنٹ ‘ بیرونی سفارتخانہ اور بیرونی مہمانوں کی سکیوریٹی کیلئے ایک علیحدہ میکانزم کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے واضح کیا کہ بی جے پی کی دہلی یونٹ پہلے ہی اس سلسلہ میں اپنی تجویز پیش کرچکی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی پارٹی نے اب جو مطالبہ کیا ہے

اس پر مباحث اور اتفاق رائے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے اس مطالبہ پر دھرنا منظم کرنے پر چیف منسٹر دہلی کو تنقید کا نشانہ بنایا ۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی پارٹی کو عوام نے حکمرانی کیلئے ووٹ دیا ہے اور وہ اس کی بجائے عوام کیلئے تکالیف پیدا کر رہی ہے ۔ عام آدمی پارٹی نے حکمرانی کی بجائے احتجاج کا جو راستہ اختیار کیا ہے دنیا بھر میں اس کی مذمت کی جا رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی پارٹی نے یہ ثابت کردیا ہے کہ وہ لوگ صرف احتجاج کرسکتے ہیں اور عوام کے مسائل حل کرکے حکمرانی فراہم نہیں کرسکتے ۔ انہوں نے ادعا کیا کہ جیسے ہی عام آدمی پارٹی نے کانگریس کی تائید سے حکومت تشکیل دی تھی اس کی اہمیت ختم ہوگئی ہے کیونکہ عام آدمی پارٹی کانگریس کو کرپٹ اور فرقہ پرست قرار دے چکی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی پارٹی کے سربراہ بیرونی خواتین کے ساتھ غلط برتاؤ کرنے والے اپنے وزرا کی تائید کی ہے جس سے بین الاقوامی سطح پر ہندوستان کی امیج متاثر ہوئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT