Tuesday , January 23 2018
Home / سیاسیات / عام آدمی پارٹی کے 14 کارکنوں کو ضمانت

عام آدمی پارٹی کے 14 کارکنوں کو ضمانت

نئی دہلی۔6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) عام آدمی پارٹی کے 14 کارکن جنہیں کل قومی دارالحکومت میں بی جے پی کارکنوں کے ساتھ جھڑپ کے سلسلے میں گرفتار کیا گیا تھا ، آج دہلی کی عدالت نے ضمانت منظور کرلی۔ میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ آکاش جین نے دہلی پولیس کی جانب سے ان تمام کو عدالت میں پیش کرنے کے بعد آج راحت دے دی۔ پولیس ان تمام کے خلاف زیرتصفیہ فوجداری مقدمات کے بارے میں پورے وثوق کے ساتھ جواب دینے کے موقف میں نہیں تھی چنانچہ عدالت نے ان کی ضمانت منظور کرلی۔ مجسٹریٹ کا یہ احساس تھا کہ انوسٹی گیٹنگ آفیسر نے ملزمین کو عدالتی تحویل میں دینے کی خواہش کی ہے اور انہیں تفتیش کے لئے تحویل میں لینے سے دلچسپی ظاہر نہیں کی۔ درخواست ِضمانت پر مباحث کے دوران انوسٹی گیشن آفیسر ان تمام ملزمین کے خلاف دیگر زیرتصفیہ فوجداری مقدمات کا انکشاف کرنے میں بھی ناکام رہے۔ انہوں نے صرف عدالتی تحویل میں دینے کی خواہش کی ہے۔ ان حقائق کو پیش نظر رکھتے ہوئے اور ملزمین کی جانب سے دیئے گئے تیقن کی بناء ان کی ضمانت منظور کی جاتی ہے۔ عام آدمی پارٹی کے 14 کارکنوں کو فی کس 15,000 روپئے کے شخصی مچلکہ اور اتنی ہی رقم کے مماثل ضمانت پر رہا کردیا گیا اور انہیں یہ ہدایت دی گئی کہ شواہد کو مٹانے یا تحقیقات پر اثرانداز ہونے کی کوشش نہ کریں۔پولیس نے ایف آئی آر میں عام آدمی پارٹی لیڈر اشوتوش اور شازیہ علمی کا بھی نام درج کیا لیکن ان دونوں کو گرفتار نہیں کیا گیا۔ پولیس نے کل جھڑپوں کے بعد 33 افراد کو حراست میں لیا تھا جن میں سے 14 کو گرفتار کرنے کے بعد مابقی کو چھوڑ دیا گیا۔

انتخابی عمل میں رخنہ اندازی کرنے ماؤسٹوں کا منصوبہ
کوارپٹ (اڈیشہ) ۔ 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کوراپٹ ڈسٹرکٹ میں ہوئے ایک انکاونٹر میں دو ماؤسٹوں کی ہلاکتوں کے بعد پولیس کو شبہ یکہ ماؤسٹوں کا ایک بڑا گروپ منگوڈاولسا جنگلات میں جمع ہوا ہے تاکہ عام انتخابات کے دوران رکاوٹیں پیدا کی جاسکیں۔

TOPPOPULARRECENT