Sunday , January 21 2018
Home / سیاسیات / عام آدمی پارٹی اقتدار میں آنے پر تعلیمی نظام میں اصلاحات

عام آدمی پارٹی اقتدار میں آنے پر تعلیمی نظام میں اصلاحات

نئی دہلی 20 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) تعلیمی اداروں کو مزید خود اختیاری کی وکالت کرتے ہوئے عام آدمی پارٹی سربراہ اروند کجریوال نے آج کہاکہ دہلی کے اسمبلی انتخابات میں اگر ان کی پارٹی کو اقتدار میں لایا گیا تو تعلیمی نظام میں انسپکٹر راج کو ختم کردیا جائے گا۔ اُنھوں نے بتایا کہ سرکاری اسکول میں اساتذہ سے ایک کلرک کی طرح کام لیا جارہا ہے

نئی دہلی 20 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) تعلیمی اداروں کو مزید خود اختیاری کی وکالت کرتے ہوئے عام آدمی پارٹی سربراہ اروند کجریوال نے آج کہاکہ دہلی کے اسمبلی انتخابات میں اگر ان کی پارٹی کو اقتدار میں لایا گیا تو تعلیمی نظام میں انسپکٹر راج کو ختم کردیا جائے گا۔ اُنھوں نے بتایا کہ سرکاری اسکول میں اساتذہ سے ایک کلرک کی طرح کام لیا جارہا ہے۔ محکمہ تعلیمات کی جانب سے رپورٹس تیار کرنے اور انتخابات کی ڈیوٹی انجام دینے کی ہدایت دی جارہی ہے۔ مسٹر اروند کجریوال نے یہاں سینٹ اسٹیفن کالج میں ایجوکیشن کانفرنس کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ پرنسپالس (صدر مدرس) کے اختیارات چھین لئے گئے ہیں اور تعلیمی نظام میں انسپکٹر راج مسلط کردیا گیا ہے

جسے ختم کرنے کی ضرورت ہے۔ یہ دعویٰ کرتے ہوئے دہلی کے مجوزہ انتخابات میں صحت اور تعلیم عام آدمی کا اہم ایجنڈہ ہوگا، اُنھوں نے کہاکہ اگر پارٹی کو اقتدار حاصل ہوا تو آئندہ 5 سال کیلئے ایک لائحہ عمل تیار کرلیا جائے گا۔ سابق چیف منسٹر نے کہاکہ سرکاری اسکولوں میں تعلیمی معیار کے انحطاط کے لئے بعض مفادات حاصلہ نے گھناؤنا رول ادا کیا ہے۔ جبکہ کنٹراکٹ کی بنیاد پر اساتذہ کے تقررات کو روک دیا جائے گا۔ اُنھوں نے سرکاری اور خانگی تعلیمی اداروں کا تقابل کرتے ہوئے کہاکہ ہم خانگی اسکولوں کے خلاف نہیں ہیں لیکن اساتذہ کے کام کے حالات بہتر بنانے کے عہد پر کاربند ہے۔ انھوں نے استفسار کیاکہ اساتذہ کی قلت کے باوجود ان کی خدمات کنٹراکٹ کی بنیاد پر کیوں حاصل کی جارہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT