Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / عثمانیہ یونیورسٹی بیف فیسٹیول کو سیاسی رنگ دینے کی مذمت

عثمانیہ یونیورسٹی بیف فیسٹیول کو سیاسی رنگ دینے کی مذمت

بلدی انتخابات کے پیش نظر بی جے پی فرقہ پرستانہ ایجنڈہ پر عمل پیرا
حیدرآباد۔8ڈسمبر(سیاست نیوز) سیاسی مفادات حاصلہ کے لئے مذہب کی بنیاد پر بیف فیسٹول کو تنازعہ بناکر فرقہ پرست طاقتیں سیاسی روٹیاں سینکنے کی کوشش کررہے ہیں جبکہ عثمانیہ یونیورسٹی میں بیف فیسٹول کا سابق میں بھی انعقاد عمل میںلایاگیا ہے اس کے علاوہ ایفلو اور حیدرآباد یونیورسٹی کے طلبہ نے بھی ماضی میںبیف فیسٹول کا اہتمام کرتے ہوئے اپنے جمہوری حقوق کی حفاظت کی ہے مگر اس بار عثمانیہ یونیورسٹی طلبہ کی جانب سے بیف فیسٹول کے خلاف بی جے پی رکن اسمبلی راجہ سنگھ کے متنازعہ بیان کے سبب ریاست تلنگانہ کے حالات یکسر تبدیل ہوگئے اور عثمانیہ یونیورسٹی میںمنعقدہونے والا روایتی بیف فیسٹول ایک بڑے تنازع کی وجہہ بن گیا ہے۔آج یہاں شہر میںایس سی ‘ ایس ٹی ‘ بی سی ‘ مسلم فرنٹ کے کنونیر پروفیسر انور خان نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ان خیالات کا اظہار کیا۔چیف کنوینر فرنٹ ثناء اللہ خان ‘ کنونیرزپریم کمار‘ حیات حسین حبیب‘ کونڈہ لکشمن سوامی‘ رشید خان آزاد بھی اس موقع پر موجود تھے۔ پروفیسر انورخا ن نے کہاکہ عدم روادری ہندوستان کا سب سے بڑا موضوع بنا ہوا ہے اور ملک میں چاروں طرف عدم روداری پر بحث کا سلسلہ جاری ہے اس بیچ ہریانہ کے چیف منسٹر منوہر لال کھٹر بیف استعمال کرنے والوں کو پاکستان جانے کا مشورہ دیتے ہیں جبکہ بیف کی تائید وحمایت کرنے والے کرناٹک کے چیف منسٹر سدارامیا کو سرقلم کردینے کی دھمکی دی جاتی ہے ۔ انہوں نے کہاکے افسوس تو اس بات کا ہے کہ جمہوری ہندوستان میں قانون بنانے والوں کی زبان اور سر محفوظ نہیںہیں ۔پروفیسر انورخان یونیورسٹی کے بجائے اپنے گھر میں بیف پکانے اور استعمال کرنے کا طلبہ کے مشورہ کے متعلق سوال کا جواب دیتے ہوئے کہاکہ اتر پردیش کے دادری کو کس طرح ہم فراموش کرسکتے ہیں جہاں پر گھر کے اندر بیٹھے ایک معمر شخص کو گائے کا گوشت استعمال کرنے کے جھوٹے الزام میںسینکڑوں کی تعداد پر مشتمل فرقہ پرستوں کے ٹولے نے پیٹ پیٹ کر موت کے گھاٹ اتاردیا جبکہ نہ صرف الزام جھوٹا تھابلکہ دادری کے اخلاق کا جواں سال بیٹا اس ملک کی حفاظت کے لئے فوج میںخدمات انجام دے رہا ہے۔انہوں نے مزیدکہاکہ ماضی میں بیف فیسٹول کے انعقاد کے خلاف اس قسم کی سازش نہیں کی گئی انہوں نے مزیدکہاکہ مجوزہ بلدی انتخابات کے پیش نظر بی جے پی شہر حیدرآباد میںاپنے کمزور موقف کو مستحکم کرنے کے لئے عثمانیہ یونیورسٹی کے بیف فیسٹول کا سہارا لے رہی ہے۔ چیف کنونیر فرنٹ ثناء اللہ خان نے بیف فیسٹول کے کامیاب انعقاد میںرغنہ پیدا کرنے کا نارتھ انڈیا کے فرقہ پرست ذہن کے حامل سیاسی قائدین اور کاروباریوں پر الزام عائد کیا جو متحدہ ریاست آندھرا پردیش کے دور سے ہی تلنگانہ کی پرامن فضاء کو مکدر کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT