Monday , June 25 2018
Home / شہر کی خبریں / عثمانیہ یونیورسٹی جے اے سی سے انتخابی طلبہ کی نامزدگی

عثمانیہ یونیورسٹی جے اے سی سے انتخابی طلبہ کی نامزدگی

سیاسی جماعتوں کے غیر منصفانہ رویہ کے خلاف مقابلہ آرائی کا اعلان

سیاسی جماعتوں کے غیر منصفانہ رویہ کے خلاف مقابلہ آرائی کا اعلان

حیدرآباد ۔ 20 ۔ مارچ : ( راست ) : آرٹس کالج عثمانیہ یونیورسٹی میں تلنگانہ اسٹوڈنٹ جوائنٹ ایکشن کمیٹی اور عثمانیہ یونیورسٹی جوائنٹ ایکشن کمیٹی کا ایک مشترکہ اجلاس سیاسی جماعتوں کی جانب سے تحریک تلنگانہ میں بنیادی کردار ادا کرنے والے طلبہ کو نظر انداز کیے جانے کے تناظر میں ایک اجلاس منعقد کیا گیا ۔ جس میں یہ طے کیا گیا کہ تلنگانہ ریاست کے قیام کے بعد منعقد ہونے والے پہلے سیاسی انتخابات میں سیاسی جماعتوں کی خود غرضی اور عوام کے تئیں ان کے غیر کارکرد بلکہ ان کے کردار کو دیکھتے ہوئے انتخابات میں تحریک تلنگانہ میں سرگرم رول ادا کرنے والے طلبہ کو مختلف اسمبلی اور پارلیمنٹ حلقہ جات سے نامزد کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔ اس سلسلہ میں پہلی لسٹ جاری کی گئی اور آنے والی لسٹوں کے لیے پروفیسرس کی ایک کمیٹی تشکیل دی گئی جو ایڈوکیٹ اور ملازمین میں سے امیدواروں کو نامزد کرے گی ۔ اس میٹنگ میں کے سی آر کی جانب سے مسلمانوں کے تعلق سے روا رکھے گئے تعصبانہ رویہ اور ان کی حیثیت کا مذاق ا ڑانے کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کی گئی ۔ پہلی لسٹ میں نلگنڈہ سے پارلیمنٹ کے لیے وٹی کنڈراما راؤ گوڑ کو نامزد کیا گیا ہے اور اسمبلی حلقہ جات میں حضور نگر سے سامبا شیوا گوڑ ، پالیر ( کھمم ) سے بوما ہنمنت راؤ ، مدیرا ( کھمم ) سے بنڈارو ویرا بابو ، جنگم سے بالا لکشمی ، حسن آباد ( کریم نگر ) سے ویلو پولا سنجے ، عنبر پیٹ سے محمد یونس پرویز ، سوریہ پیٹ سے پٹیالہ ملیش ، بالاکرتی سے نوی تیجہ ریڈی ، چارمینار سے محمد عبدالعلی ، مشیر آباد سے محمد وحید الدین اور صنعت نگر سے محمد فیاض کو نامزد کیا گیا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT