Tuesday , September 25 2018
Home / Top Stories / عثمان ساگر کو خوبصورت بنانے 100 کروڑ روپئے منظور

عثمان ساگر کو خوبصورت بنانے 100 کروڑ روپئے منظور

واکنگ ٹریک ‘ سائیکلنگ ٹریک اور سڑکوں کی تعمیر پر توجہ ۔ دوسرے مرحلہ میں ہوٹلوں ‘ کیبل کار اور ہاوز بوٹس کی فراہمی
حیدرآباد 5 مارچ ( پی ٹی آئی ) حکومت تلنگانہ نے آج عثمان ساگر جھیل کو خوبصورت بنانے 100 کروڑ روپئے مختص کرنے کی انتظامی منظوری دیدی ہے ۔ عثمان ساگر جھیل ( گنڈی پیٹ ) شہر کو پینے کا پانی فراہم کرنے کا اہم ذخیرہ آب ہے ۔ پرنسپل سکریٹری بلدی نظم و نسق اروند کمار نے اس سلسلہ میں احکام جاری کئے ۔ ایک سرکاری اعلامیہ میں یہ بات بتائی گئی ۔ کہا گیا ہے کہ یہ اخراجات راست حیدرآباد میٹرو پولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے فنڈز سے پورے کئے جائیں گے ۔ مسٹر اروند کمار نے بتایا کہ ایچ ایم ڈی اے کے تحت ایک ٹاسک فورس گنڈی پیٹ لیک ڈیولپمنٹ ٹاسک فورس قائم کی جائیگی جس میں سیاحت ‘ محکمہ مال ‘ آبپاشی ‘ آبرسانی بورڈ اور سدرن پاور ڈسٹریبیوشن کمپنی اور سوشیل فاریسٹری کے حکام شامل رہیں گے ۔ کہا گیا ہے کہ ایچ ایم ڈی اے کی جانب سے ایک ایکشن پلان تیار کیا جائیگا تاکہ اس جھیل کو پینے کے پانی کی فراہمی کا اہم ذریعہ بنایا جاسکے ۔ اس کے علاوہ یہاں ماحولیاتی بہتری کے ساتھ تفریحی مرکز بھی قائم کیا جائیگا ۔ ایچ ایم ڈی اے کی جانب سے عصری اور بہترین آلات کو استعمال کرتے ہوئے قدرتی حسن کو سبزہ زار سے جوڑا جائیگا ۔ ایچ ایم ڈی اے سے عثمان ساگر کو سیاحوں کیلئے تفریحی مقام بنانے بھی اقدامات کئے جائیں گے تاہم پانی کے معیار پر سمجھوتہ نہیں کیا جائیگا اور ایسی کوئی سرگرمی نہیں کی جائیگی جس سے راست یا بالواسطہ طور پر ذخیرہ آب کو نقصان پہونچے ۔ انہوں نے کہا کہ ابتدامیں واکنگ ٹریک ‘ سائیکلنگ ٹریک ‘ سڑکوں کی تعمیر ‘ اسٹریٹ لائٹنگ ‘ اور لینڈ اسکیپنگ وغیرہ پر توجہ دی جائیگی ۔ انہوں نے کہا کہ ان کاموں کی تکمیل کے بعد ریوالونگ ریسٹورنٹ ‘ کیبل کار ‘ ہاوز بوٹس ‘ رات میں توقف کے مقامات ‘ فوڈ کورٹس وغیرہ کے قیام پر عوامی ۔ خانگی شراکت کی بنیاد پر توجہ دی جائیگی ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT