Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / عدالتی ہدایت کا خیرمقدم ، چیف منسٹر کا ردعمل

عدالتی ہدایت کا خیرمقدم ، چیف منسٹر کا ردعمل

حیدرآباد۔ 7 جنوری (سیاست نیوز) چیف منسٹر تلنگانہ کے چندر شیکھر راؤ نے گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات سے متعلق حکومت کے احکامات پر ہائیکورٹ کے دیئے گئے حکم التواء اور انتخابات کے سلسلے میں حکومت کو دی گئی ہدایت کا خیرمقدم کیا اور کہا کہ وہ ہائیکورٹ کے احکامات کا احترام کرتے ہیں اور ان کی حکومت قانون کی پابند ہے۔ آج ہائیکورٹ کے فیصلہ پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ محض حکومت اور عوام کیلئے درپیش دو تین اہم مسائل کی یکسوئی کیلئے مختصر مدت میں جی ایچ ایم سی انتخابات منعقد کرنے کے خیال کا اظہار کیا گیا تھا۔ گریٹر انتخابات کیلئے ایک لاکھ ملازمین درکار ہیں جبکہ تلنگانہ میں جملہ سرکاری ملازمین کی تعداد 3 لاکھ روپئے ہے، اس طرح ایک تہائی ملازمین ایک ماہ تک انتخابی ڈیوٹی میں مصروف ہوں گے جس کے سبب نظم و نسق چلانے مشکلات پیش آسکتی ہیں اور ترقیاتی پروگرامس پر اثر پڑسکتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ شہر میں عوام کی کثیر آبادی کے پیش نظر انتخابات سے عوام کو بھی مشکلات سے دوچار ہونا پڑے گا لہذا مذکورہ تمام وجوہات کو پیش نظر رکھتے ہوئے گریٹر انتخابات کو انتہائی مختصر مدت میں مکمل کرلینے کا فیصلہ کیا تھا اور انتخابی اصلاحات کے ایک حصہ کے طور پر حکومت تلنگانہ نے یہ ارادہ کیا تھا لیکن ہائیکورٹ کے نوٹیفکیشن کی اجرائی سے 21 یوم میں رائے دہی کروانے کی ہدایت دی ہے۔ چیف منسٹر نے ان ہدایات کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ حکومت تلنگانہ ، عدلیہ اور اس کی ہدایات کا احترام کرتی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT