Friday , November 24 2017
Home / عرب دنیا / عراق میں سپریم کورٹ جج کے استعفیٰ کا مطالبہ مسترد

عراق میں سپریم کورٹ جج کے استعفیٰ کا مطالبہ مسترد

بغداد ۔ 18 اگست (سیاست ڈاٹ کام) عراق کے حکام عدلیہ نے ان مطالبات کو مسترد کردیا ہے جہاں سپریم کورٹ کے جج سے استعفیٰ طلب کیا گیا ہے حالانکہ سرکاری سطح پر مختلف شعبوں میں اصلاحات کا مطالبہ کرنے والے احتجاجی گذشتہ ہفتہ سڑک پر نکل آئے تھے اور اصلاحات کے علاوہ سپریم کورٹ کے جج کو مستعفی ہوجانے کا مطالبہ بھی شدت اختیار کر گیا تھا۔ دریں اثناء سپریم کورٹ کونسل کے ترجمان عبدالستار نے کہا کہ کونسل ارکان نے سپریم کورٹ کے جج مسٹر محمود کو مستعفی ہوجانے کے مطالبہ کو مسترد کردیا۔ کونسل کو عراق کی اعلیٰ ترین قانونی اتھاریٹی تصور کیا جاتا ہے جو سیول اور شرعی قوانین کے ماہرین پر مشتمل ہے اور یہی کونسل سپریم کورٹ کیلئے بھی ججس کا انتخاب کرتی ہے۔ مسٹر عبدالستار نے کہا کہ مفاد عامہ اور انصاف کا تقاضہ یہی ہیکہ مسٹر محمود اپنے عہدہ پر برقرار رہیں۔ یہاں اس بات کا تذکرہ بھی دلچسپ ہوگا کہ عراقی حکومت نے اصلاحات کے منصوبوں کو عملی جامہ پہنانے کا فیصلہ کیا ہے جسے ملک کے شیعہ مذہبی اتھاریٹی کی تائید بھی حاصل ہے تاکہ بدعنوانیوں کا خاتمہ کیا جاسکے اور سرکاری مصارف جو اسراف کے سواء کچھ نہیں، ان پر قابو پایا جاسکے یا پھر ان میں نمایاں کمی کی جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT