Thursday , January 18 2018
Home / اضلاع کی خبریں / عرس تقاریب قومی یکجہتی کے فروغ کا ذریعہ

عرس تقاریب قومی یکجہتی کے فروغ کا ذریعہ

بالکنڈہ میں علماء و مشائخین کا خطاب

بالکنڈہ میں علماء و مشائخین کا خطاب
حیدرآباد۔/10اگسٹ، ( پریس نوٹ ) قرآن و سنت سے ایصال ثواب بغیر کسی شک کے ثابت ہے۔ اولیاء و صالحین کے مزارات پر جانا بڑی سعادت کی بات ہے اور وہاں کی جانے والی دعائیں بارگاہ رب العزت میں مقبول و منظور ہوتی ہیں ۔ ان کا عرس منعقد کرنا ایصال ثواب اور لوگوں سے تعلیمات اولیاء صالحین بیان کرنا تبلیغ دین کا ایک ذریعہ ہے۔ عرس کا دن متعین کرنا کہ اولیاء و صالحین کی روحیں ان کے وصال کے دن اپنے قبور کی جانب زیادہ متوجہ ہوتی ہیں۔ چنانچہ وہ وقت جو خاص وصال کا ہے اخذ برکات کیلئے مناسب ہوتا ہے۔ عرس کے موقع پر جو کام جائز ہیں وہ جائز ہیں اور جو ناجائز ہیں وہ ناجائز ہیں۔ اہل سنت کے نزدیک یہ بات مسلمہ ہے کہ انبیاء کرام اور اولیاء و صالحین کی حیات مبارکہ میں اور بعد از وصال ان کو وسیلہ بنانا قرآن و سنت سے ثابت ہے۔ جس سے دنیا میں فیض حاصل کیا جاتا تھا بعد از وصال بھی فیض ملتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار بالکنڈہ نظام آباد میں منعقدہ عرس شریف حضرت ابوالفتح سید بندگی بادشاہ قادریؒ نبیرہ سیدنا غوث الاعظم میں منعقدہ جلسہ فیضان اولیاء سے خطاب کرتے ہوئے علماء و مشائخ نے کیا۔ جلسہ کی صدارت مولانا ڈاکٹر سید شاہ محمد غوث محی الدین قادری الموسوی اعظم پاشاہ جانشین حضرت علامہ وحید العصر عارف علیہ الرحمہ نے کی۔ مولانا سید محمد علی قادری الہاشمی ممشاد پاشاہ، نبیرہ حضرت سید زرد علی شاہ مہاجر مکی نے خطاب کیا۔ سجادہ نشین و متولی مولانا ابوالفتح سید بندگی بادشاہ المعروف ریاض پاشاہ قادری نے مراسم عرس انجام دیئے۔ بارگاہ رسالت مآبؐ میں صلوٰۃ و سلام کا نذرانہ پیش کیا گیا۔ معزز مہمانوں اور معتقدین و اہلیان بالکنڈہ کیلئے طعام تبرک کا اہتمام کیا گیا تھا۔ مولانا ڈاکٹر سید شاہ محمد غوث محی الدین قادری الموسوی اعظم پاشاہ جانشین حضرت علامہ وحید العصر عارف علیہ الرحمہ کے ہاتھوں کمسن بچوں میں انعامات کی تقسیم عمل میں آئی۔ مولانا سید شاہ درویش محی الدین قادری الموسوی مصطفی پاشاہ و دیگر علماء و مشائخ نے شرکت کی۔ اس موقع پر میڈیکل کیمپ کا انعقاد عمل میں آیا۔ شہر سے ڈاکٹر محمد بن محفوظ اور ڈاکٹر شاہد علی ڈپٹی ڈائرکٹر ڈپارٹمنٹ آف ایوش منسٹری آف ہیلت اینڈ فیملی ویلفیر تشخیص و خدمات کیلئے موجود رہے۔ ضلع نظام آباد کی عوام اور معتقدین نے استفادہ کیا۔ حیدرآباد سے قافلہ کی شکل میں بالکنڈہ کے لئے روانگی عمل میں آئی ۔ قبل ازیں سابق سجادگان اہل خدمات کے مزارات واقع قبرستان متصل مسجد الہی چادر گھاٹ پر چادر گل پیش کی گئی۔ وزیر اعلیٰ ریاست تلنگانہ مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے عرس شریف حضرت سید شاہ ابوالفتح بندگی بادشاہ قادری ؒ کے موقع پر ایک پیام روانہ کرتے ہوئے تقاریب عرس ، میڈیکل کیمپ منعقد کرنے پر سجادہ نشین و متولی مولانا ابوالفتح بندگی بادشاہ قادری المعروف ریاض پاشاہ کو مبارکباد دی اور قومی یکجہتی کے فروغ کیلئے ان کی خدمات کی ستائش کی اور نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔ ڈپٹی چیف منسٹر و ریونیو منسٹر ریاست تلنگانہ جناب محمد محمود علی نے تقاریب عرس شریف کو اولیاء و صالحین کی تعلیمات کو عام کرتے ہوئے قیام امن کے فروغ و بھائی چارگی کا ذریعہ قرار دیتے ہوئے مسرت کا اظہار کیا اور مبارکباد دی۔ جناب عود بن محمد قادری ، جناب سید کلیم اللہ حسینی نے انتظامات میں حصہ لیا، تقاریب عرس میں محکمہ پولیس، آر اینڈ بی اور عہدیداران انسپکشن بنگلو محکمہ گرام پنچایت وغیرہ نے تعاون کیا۔ اس تعاون پر برادر سجادہ مولانا سید شاہ درویش محی الدین قادری صادق پاشاہ و خلف سجادہ نشین جناب سید محمد صدیق پاشاہ قادری نے شکریہ ادا کیا۔

TOPPOPULARRECENT