عشرت جہاں فرضی انکاؤنٹر : سی بی آئی کی سابق ڈائریکٹر آئی بی پر مقدمہ چلانے اجازت طلبی

نئی دہلی۔ 19 فروری (سیاست ڈاٹ کام) اُس وقت کے ڈائریکٹر انٹلیجنس بیورو راجندر کمار پر مقدمہ چلانے کی مرکزی وزارت داخلہ سے سی بی آئی نے اجازت طلب کی ہے، اور اپنے موقف کا اعادہ کیا ہے کہ ڈائریکٹر پر مقدمہ چلانے کیلئے اس کے پاس کافی شہادتیں موجود ہیں۔ محکمہ نے کہا کہ حال ہی میں ایک وضاحت روانہ کی گئی ہے کہ جو مرکزی وزارت داخلہ کے نشاندہی ک

نئی دہلی۔ 19 فروری (سیاست ڈاٹ کام) اُس وقت کے ڈائریکٹر انٹلیجنس بیورو راجندر کمار پر مقدمہ چلانے کی مرکزی وزارت داخلہ سے سی بی آئی نے اجازت طلب کی ہے، اور اپنے موقف کا اعادہ کیا ہے کہ ڈائریکٹر پر مقدمہ چلانے کیلئے اس کے پاس کافی شہادتیں موجود ہیں۔ محکمہ نے کہا کہ حال ہی میں ایک وضاحت روانہ کی گئی ہے کہ جو مرکزی وزارت داخلہ کے نشاندہی کردہ 12 واضح خامیوں کا جواب دیا گیا ہے۔ وزارت داخلہ نے سی بی آئی کی متاثرین کے پاس سے ضبط کئے ہوئے ہتھیاروں کے سی بی آئی کے نظریہ نے کوتاہیوں کے بارے میں وضاحت طلب کی تھی۔ گواہوں کے بیانات اور ان کی شناخت بھی دیگر باتوں کے علاوہ اس میں ملوث تھی۔ سی بی آئی کے ذرائع نے کہا کہ محکمہ نے کوئی تازہ تفصیلات پیش نہیں کی ہیں بلکہ وزارتِ داخلہ کے اٹھائے ہوئے نکات کے بارے میں اپنے سابقہ موقف کا اعادہ کیا ہے اور ادعا کیا ہے کہ سابق ڈائریکٹر آئی بی راجندر کمار پر مجرمانہ سازش میں مبینہ شرکت کیلئے مقدمہ چلایا جاسکتا ہے۔ وزارت اور سی بی آئی دونوں میں مسائل پر تنازعہ پیدا ہوگیا ہے، کیونکہ سی بی آئی نے مقدمہ کی تفصیلات سے مرکزی وزارت ِداخلہ کو واقف کروانے سے انکار کردیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT