Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / عصری انٹرنیٹ ٹکنالوجی ’’لون‘‘ کا پائلٹ پراجکٹ

عصری انٹرنیٹ ٹکنالوجی ’’لون‘‘ کا پائلٹ پراجکٹ

تلنگانہ ، آندھراپردیش یا مہاراشٹرا میں کسی ایک ریاست کا انتخاب متوقع

حیدرآباد۔24مئی(سیاست نیوز) عصری انٹرنیٹ ٹیکنالوجی ’’لون‘‘ تلنگانہ کے کسی شہر سے شروع ہوگی یا آندھرا پردیش کا انتخاب عمل میں آئے گا؟ نیشنل انفارمیٹکس سنٹر کی جانب سے گوگل کی تیار کردہ ’’لون‘‘ انٹرنیٹ ٹکنالوجی کے  پائلیٹ پراجکٹ کیلئے ریاست کے انتخاب کا عمل جاری ہے۔ باوثوق ذرائع کے بموجب ریاست آندھرا پردیش ‘ تلنگانہ یا پھر مہاراشٹرا میں این آئی سی کی جانب سے یہ تجربہ کیا جا سکتا ہے۔ جاریہ ہفتہ کے اواخر یا آئندہ ہفتہ کے اوائل میں یہ تجربہ مذکورہ تین ریاستوں کے کسی شہر میں کیا جا سکتا ہے۔ لون ٹکنالوجی کا استعمال وائی فائی اور دیگر وائر کے ذریعہ فراہم کی جانے والی انٹرنیٹ خدمات کا بہترین متابادل ثابت ہو گی۔ تفصیلات کے بموجب غبارہ کی شکل میں فضاء میں چھوڑی جانے والی اس لون ٹکنالوجی کے ذریعہ شہر کو انٹرنیٹ سے مربوط کرنے میں آسانی پیدا ہوگی اور یہ ایک غبارہ شہر کو انٹرنیٹ خدمات کی فراہمی کیلئے کافی ہوگا۔ سال گزشتہ گوگل کی جانب سے لون ٹکنالوجی کو متعارف کروانے کے اعلان کے ساتھ یہ کہا گیا تھا کہ انٹرنیٹ خدمات کی فراہمی میں آنے والے اس انقلاب کا تجرباتی بنیادوں پر آغاز ہندستان کے کسی شہر سے کیا جائے گا اور امید ظاہر کی گئی تھی کہ خدمات کے آغاز کے ساتھ ہی دنیا بھر میں اسے وسعت دی جائے گی۔ گوگل کی جانب سے لون خدمات کے آندھرا پردیش کے کسی شہر میں شروع کئے جانے کے امکانات زیادہ نظر آرہے ہیں چونکہ سی ای او گوگل کے تعلقات آندھرا پردیش کے برسراقتدار خاندان سے بہت زیادہ قریبی ہیں۔ ساتھ ہی یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ تلنگانہ میں گوگل کیمپس موجود ہونے کے سبب لون خدمات کا تجربہ طور پر آغاز تلنگانہ کے کسی شہر میں ممکن ہے جبکہ نیشنل انفارمیٹک سنٹر جو کہ قومی ادارہ ہے وہ اس مقصد کیلئے مہاراشٹرا کے انتخاب کے متعلق کوشاں ہے۔  بتایا جاتا ہے کہ اس تاریخی تجربہ کیلئے شہر کے انتخاب کو قطعیت دینے کے بعد ہی گوگل کی جانب سے تاریخ کا اعلان کیا جائے گا۔ لون ٹکنالوجی کا تجربہ کامیاب ہونے کی صورت میں یہ تجربہ انٹرنیٹ کی دنیا میں انقلابی تبدیلیاں لائے گا ۔شہری علاقوں سے فضاء میں چھوڑے جانے والے یہ غبارے دیہی علاقوں میں انٹرنیٹ خدمات پہنچانے میں بھی معاون ثابت ہوں گے۔

TOPPOPULARRECENT