عصر حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ نئی تعلیمی پالیسی زیر غور

حیدرآباد ۔ 24 اگسٹ ( پی ٹی آئی) مرکزی وزیر فروغ انسانی وسائل سمرتی ایرانی نے آج کہا کہ عصر حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ درکار نئی تعلیمی پالیسی کی ترتیب و تدوین کے لئے مرکزی حکومت بہت جلد ریاستی ‘ علاقائی اور قومی سطحوں پر بحث و مباحث کا آغاز کرے گی ۔ کیشو میموریل ایجوکیشنل سوسائٹی کی پلاٹنم جوبلی تقاریب کے ضمن میں سوسائٹی کے زیر اہتمام

حیدرآباد ۔ 24 اگسٹ ( پی ٹی آئی) مرکزی وزیر فروغ انسانی وسائل سمرتی ایرانی نے آج کہا کہ عصر حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ درکار نئی تعلیمی پالیسی کی ترتیب و تدوین کے لئے مرکزی حکومت بہت جلد ریاستی ‘ علاقائی اور قومی سطحوں پر بحث و مباحث کا آغاز کرے گی ۔ کیشو میموریل ایجوکیشنل سوسائٹی کی پلاٹنم جوبلی تقاریب کے ضمن میں سوسائٹی کے زیر اہتمام ’بھارتیہ اقدار کے مطابق ہمارے تعلیمی نظام کی عصر نو ترتیب ‘کے زیر عنوان منعقدہ ایک سمپوزیم سے خطاب کرتے ہوئے سمرتی ایرانی نے کہا کہ ’’1986 میں آخری مرتبہ قومی تعلیمی پالیسی دوبارہ ترتیب دی گئی تھی اگر ہمیں ’ میڈ ان انڈیا‘ کو ایک بڑا معروف لیبل بنانا ہے تو ہمیں ہماری تعلیمی پالیسی اور عمل کو درست کرنے کی ضرورت ہوگی ۔ مجھے یہاں یہ کہتے ہوئے خوشی محسوس ہوتی ہے کہ مرکزی حکومت ایک نئی تعلیمی پالیسی کی ترتیب کے لئے ریاستی ‘ علاقائی اور قومی سطح پر مباحث اور مذکرات کا آغاز کرے گی ‘‘ موجودہ نسل کے نوجوانوں میں ملک کے مختلف شعبہ ہائے حیات میں عظیم ہندوستانی افسانوی شخصیات کے حیات و کارناموں کے بارے میں خاطر خواہ شعور و معلومات کے فقدان پر سخت افسوس کا اظہار کرتے ہوئے سمرتی ایرانی نے کہا کہ ہمیں تو ’’قدیم ہندوستان کی عظمتوں ‘‘کا جشن منانے کی ضرورت ہے ۔مرکزی وزیر اس ضمن میں چند مثالیں پیش کرتے ہوئے کہا کہ قدیم ہندوستانی ریاضی داں و ماہر علوم نجوم و فلکیات آریہ بھٹ کی عظیم خدمات کا علم اس وقت ہوا جب ہمارے طلبا ریاضی میں ماسٹرس ڈگری کی ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے چند عہدیداروں نے ہندوستانی قومی ترانگا بنانے والے ممتاز مجاہد آزادی لنگری وینکیا کے بارے میں معلومات کا فقدان دیکھا گیا جب انہوں نے وینکیا کے بارے میں مضموم نویسی کے مقابلہ کے موقع پر ان سے ربط پیدا کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ طلبا و نوجوانوں کو بشمول بقید حیات تمام عظیم ہندوستانیوں کے بارے میں معلومات رکھنا چاہئے ۔ کیونکہ وہ بین الاقوامی مشہور معروف شخصیات کے بارے میں معلومات کے لئے انٹرنیٹ کا استعمال کرتے ہیں ۔ سمرتی ایرانی کہا کہ حکومت نے 25 فبروری 2015 کو ’ ماترو بھاشا دیوس‘ (یوم مادری زبان) منانے کا منصوبہ بنایا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT