Tuesday , December 18 2018

عصمت ریزی کی شکار ہندو لڑکی کو پاکستانی عدالت کا تحفظ

اسلام آباد ۔ 2 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) جنوبی سندھ صوبہ میں ایک پاکستانی عدالت نے پولیس کو حکم دیا ہیکہ وہ اقلیتی ہندو فرقہ سے تعلق رکھنے والی ایک لڑکی کو تحفظ فراہم کرے جس کی گذشتہ ماہ ایک بارسوخ خاندان سے تعلق رکھنے والے شخص نے عصمت ریزی کی تھی۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ احمد علی شیخ نے کل یہ حکمنامہ جاری کیا جس میں انہوں نے ڈی آئی جی میرپور خاص اور عمرکوٹ کے پولیس سپرنٹنڈنٹ کو حکم دیا کہ متاثرہ لڑکی اور اس کے ارکان خاندان کو تحفظ فراہم کیا جائے اور ساتھ ہی ساتھ بارسوخ خاندان سے تعلق رکھنے والے ملزم کے خلاف کارروائی کرنے کا حکم بھی انہوں نے جاری کیا۔

TOPPOPULARRECENT