Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / عوام کیا چاہتے ہیں نواب صاحب کنٹہ میں سیوریج ، آلودہ پانی ، سڑک اور اسٹریٹ لائٹس کے مسائل

عوام کیا چاہتے ہیں نواب صاحب کنٹہ میں سیوریج ، آلودہ پانی ، سڑک اور اسٹریٹ لائٹس کے مسائل

بزرگ شہریوں ، ذمہ داران مساجد اور غیر سرکاری تنظیموں کا اجلاس کے ذریعہ مسائل کو حل کرنے کی ضرورت
حیدرآباد ۔  9 ۔ ستمبر  (سیاست  نیوز) شہر میں عوام کو کئی مسائل درپیش ہے لیکن پرانے شہر کے بیشتر علاقوں میں نامناسب سیوریج نظام اور سڑکوں کی ابتری عوام کیلئے شدید تکلیف کا باعث ہے۔ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے حدود میں موجود نواب صاحب کنٹہ بلدی ڈیویژن کے مسائل شہر کے دیگر مسائل سے کچھ حد تک مختلف ہیں اور اس علاقہ کے عوام نامناسب سیوریج نظام، آلودہ پانی ، سڑکوں کی ابتری اور رات دیر گئے اسٹریٹ لائیٹس کی عدم کارکردگی جیسے بنیادی مسائل میں ہی گھرے ہوئے ہیں۔ عوام کا کہنا یہ ہے کہ متعدد مرتبہ اس ڈیویژن میں بلدی ترقیاتی کام اعلان کئے جاتے ہیں لیکن وہ غیر منصوبہ بندی کی وجہ سے عوام کو راحت پہنچانے کے بجائے تکلیف دہ ثابت ہونے لگتے ہیں۔ عموماً سڑک کی تعمیر کے کام مکمل ہونے کے بعد آبرسانی پائپ لائین کے کاموں کی درستگی انجام دی جاتی ہے جس سے نوتعمیر شدہ سڑکیں دوبارہ خستہ حال ہوجاتی ہے اور پھر جب سڑ کیں مسطح کی جاتی ہے تو اس وقت عہدیداروں کو سیوریج کے کاموں کی یاد ستانے لگتی ہے اور پھر سے سڑک کی حالت خراب ہوجاتی ہے۔ اسی طرح کی سرگرمیوں کے سبب کئی علاقے آج بھی بنیادی سہولتوں سے محروم نظر آتے ہیں۔ علاوہ ازیں علاقہ میں موجود راشن کی دکانوں کے متعلق بھی عوام کی کئی شکایتیں ہیں اور یہ کہا جاتا ہے کہ یہ ارزاں فروشی کی دکانیں مہینے میں صرف چند یوم خدمات انجام دیتی ہیں جس کی وجہ سے غریب عوام کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ نواب صاحب کنٹہ بلدی ڈیویژن میں معمولی مسائل کے حل کیلئے بھی عوام کو سیاسی قائدین کے چکر کاٹنے پڑتے ہیں اور جب مسائل حل نہیں ہوتے تو ایسی صورت میں عوام ان مسائل کے ساتھ جینے کے عادی ہونے لگتے ہیں۔ اس علاقہ کے مکینوں کا کہنا ہے کہ اطراف و اکناف بسنے والے غریب عوام سرکاری افسران سے راست شکایت کے موقف میں نہیں ہونے کے باعث اس طرح کی صورتحال پیدا ہورہی ہے۔ اسی لئے اگر حکومت کی جانب سے محلہ واری اساس پر ہر مہینہ علاقہ کے بزرگ شہریوں بالخصوص ذمہ داران مساجد کے علاوہ علاقہ میں خدمات انجام دے رہی غیر سرکاری تنظیموں کے ذمہ داران و سیاسی قائدین کا اجلاس طلب کرتے ہوئے ان سے مشاورت کے بعد ترقیاتی کاموں کا آغاز کیا جاتا ہے تو ایسی صورت میں علاقہ کی مجموعی ترقی کو یقینی بنایا جاسکتا ہے ۔ اسی طرح محکمہ آبرسانی و برقی کی جانب سے بلز کی وصولی کیلئے جس طرح اعلانات کروائے جاتے ہیں ، اگر دونوں محکموں کی جانب سے مہینے میں کم از کم ڈیویژن کی سطح پر عوام کے ہمراہ اجلاس منعقد کرتے ہوئے شکایتوں کی وصولی و یکسوئی کے اقدامات کئے جائیں تو ممکن ہے کہ اس علاقہ میں موجود بنیادی مسائل کو فوری حل کرتے ہوئے ڈیویژن کو پاک و صاف ماحول فراہم کیا جاسکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT