Monday , June 25 2018
Home / ہندوستان / غذائی قلت کے معاملہ میں مدھیہ پردیش سر فہرست

غذائی قلت کے معاملہ میں مدھیہ پردیش سر فہرست

چیف منسٹر شیوراج سنگھ پر تنقید، مدھیہ پردیش اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اجے سنگھ کا بیان
بھنڈ، 29 دسمبر (سیاست ڈاٹ کام) مدھیہ پردیش اسمبلی میں حزب اختلاف کے رہنما اجے سنگھ نے غذائی قلت کے معاملہ پر وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا کہ وہ بچوں کے ماما بن گئے ہیں، لیکن صوبہ غذائی قلت کی معاملہ میں ملک بھر میں پہلے مقام پر ہے ۔ مسٹر سنگھ نے کل ضلع کے لھار میں ضلع سطحی سیوادل تربیتی کیمپ میں سیوا دل کے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ انہوں نے کہا کہ جب ریاست میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) حکومت بنی تھی تب یہ اعلان کیا گیا تھا کہ ریاست بدعنوانی سے پاک ہوگا، لیکن آج پورا صوبہ کرپشن سے دوچار ہے ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے پاس صرف پروگراموں کے انعقاد اور اشتہارات ہیں۔جن پر عوام کا پیسہ خرچ کر لوگوں کو بہکایا جا رہا ہے۔ سیوادل تربیتی کیمپ میں اپوزیشن لیڈر نے کارکنوں سے کہا کہ لھار کا یہ کیمپ اپنے آپ میں منفرد ہے ، کیونکہ اس کیمپ کے سربراہ ڈاکٹر گووند سنگھ ہیں۔ انہوں نے سیوادل کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایک ایک سیوادل کارکن اپنے علاقے میں 10-10 سیوادل کارکن تیار کریں اور اسی جذبہ سے پارٹی کی پالیسیوں کو لوگوں تک پہنچائیں۔ انہوں نے بتایا کیمپ میں کارکنوں کو سیاست کی راہ دکھائی جاتی ہے ۔ جس سے وہ اپنے معاشرے میں تنظیم کو مضبوط کر سکیں۔ کیمپ میں سیوادل کے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے لھار ممبر اسمبلی ڈاکٹر گووند سنگھ نے کہا سیوادل کے کارکنوں کو کیمپ سے یہ عہد لے کر جانا چاہئے کہ وہ اپنے اپنے گھر سے ایک کارکن کو آگے بڑھائیں۔ رکن اسمبلی نے تمام سیوادل کارکنوں کو ہاتھ اٹھواکر حلف بھی دلوایا۔

TOPPOPULARRECENT