Tuesday , November 21 2017
Home / عرب دنیا / غزہ میں محصور 100 بچوں کا یادگار سفر مسجد اقصیٰ

غزہ میں محصور 100 بچوں کا یادگار سفر مسجد اقصیٰ

یروشلم ۔21 اگسٹ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) غزہ میں محصور تقریباً 100 بچوں کو پہلی مرتبہ 50 کیلومیٹر دور کا فاصلہ طئے کرنے کا موقع ملا اور وہ یروشلم پہونچے جہاں انھیں ایک الگ ہی دنیا دکھائی دی ۔ ان میں سے اکثر نے پہلی مرتبہ مسجد اقصیٰ کی زیارت کی۔ یہی نہیں بلکہ اُنھیں کسی اسرائیلی کو دیکھنے کا بھی پہلی بار موقع ملا ۔ اقوام متحدہ ریلیف اینڈ ورک ایجنسی کے مغربی کنارہ فیلڈ ڈائرکٹر اسکواٹ اینڈرسن نے بتایا کہ اُنھوں نے ان بچوں کیلئے بیرونی دورہ کا انتظام کیا تھا اور یہ پروگرام منظم کرنے کیلئے تقریباً چھ ماہ لگ گئے ۔ 91 بچوں میں صرف 7ہی ایسے تھے جنھیں کبھی غزہ کے باہر جانے کا موقع ملا تھا ۔ اس گروپ میں شامل 12 سالہ رذان فراح اپنا سیل فون لئے ویڈیو گرافی کر رہی تھی ۔ اسی طرح ایک اور فلسطینی لڑکے نے مسجد اقصیٰ کے اندرونی احاطہ کی تصاویر لے رہا تھا ۔اُس نے بتایا کہ اندرونی منظر کے بارے میں اُس کی رائے کچھ اور تھی ۔ان سب نے مسجد اقصیٰ میں نماز ادا کی ۔ اسرائیل نے 140 مربع میل پر محیط غزہ پٹی کی گنجان آبادی کو عملاً محصور کر رکھا ہے اور یہاں سفر اور تجارت کی پابندیاں عائد ہیں۔ دو ملین کی اس آبادی کیلئے غزہ پٹی ہی اپنی ایک دنیا ہے اور اس علاقہ پر حماس کا کنٹرول ہے ۔ یہ دورہ بچوں کیلئے یادگار رہا اوروہ فلسطینی شہر بشمول رملہ ونابلس بھی جائیں گے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT