Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / غلام نبی آزاد کو تلنگانہ کانگریس امور کا انچارج بنانے پر غور

غلام نبی آزاد کو تلنگانہ کانگریس امور کا انچارج بنانے پر غور

ریاست میں کانگریس کو مستحکم کرنے کی مساعی ، منحرف قائدین کو متحد کرنے کی تجویز
حیدرآباد ۔ 12 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز ) : تلنگانہ کانگریس پارٹی میں نئی جان پھونکنے اور پارٹی کے تمام قائدین کو متحد کرنے کے ساتھ سرگرم بنانے کے لیے کانگریس پارٹی ہائی کمان کانگریس کے سینئیر قائد غلام نبی آزاد کو تلنگانہ کانگریس امور کا انچارج بنانے پر سنجیدگی سے غور کررہی ہے جو قائدین کانگریس سے مستعفی ہوئے انہیں دوبارہ کانگریس میں واپس لانے اور دوسری جماعتوں کے قائدین جو کانگریس میں شامل ہونا چاہتے ہیں ان کے لیے بھی پارٹی کے دروازے کھول دینے کا امکان ہے ۔ واضح رہے کہ غلام نبی آزاد کانگریس کے لیے برے دنوں میں ٹربل شوٹر کی حیثیت سے جانے جاتے ہیں جو بھی ریاست کی انہیں ذمہ داری سونپی گئی ہے بیشتر ریاستوں میں انہوں نے اپنے دم پر کانگریس کو اقتدار میں لایا ہے ۔ 2004 سے قبل 10 سال تک اپوزیشن میں رہنے والی کانگریس کو متحدہ آندھرا پردیش میں غلام نبی آزاد نے اقتدار پر لایا تھا ۔ تلنگانہ کے تمام سیاسی جماعتوں کی حکمت عملی اور قائدین کے سیاسی ہتھکنڈوں سے آزاد پوری طرح واقف ہے ۔ علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل میں غلام نبی آزاد نے بھی کلیدی رول ادا کیا تھا ۔ مختلف سروے میں حکمران ٹی آر ایس کا گراف گھٹنے اور کانگریس کا گراف بلند ہونے کا جائزہ لینے کے بعد کانگریس ہائی کمان غلام نبی آزاد کو تلنگانہ کانگریس کا انچارج نامزد کرنے پر سنجیدگی سے غور کررہی ہے ۔ ڈگ وجئے سنگھ نے لمبے عرصے تک متحدہ آندھرا اور علحدہ تلنگانہ ریاست میں کانگریس انچارج کی حیثیت سے خدمات انجام دی تھی ۔ ان کی جگہ آر سی کنٹیا کو کانگریس ہائی کمان نے انچارج نامزد کیا ہے ۔ انہیں پارٹی اور قائدین کو کنٹرول کرنے میں زیادہ وقت نہیں ملا ہے مگر جو بھی وقت ملا ہے اس میں وہ ناکام ہوئے ہیں ۔ چند پارٹی کے قائدین نے انہیں کھل کر تنقید کا نشانہ بنایا ہے تو چند قائدین دہلی پہونچکر ہائی کمان سے آر سی کنٹیا کی شکایت کی ہے ۔ ان تمام پہلوؤں پر غور کرنے کے بعد کانگریس ہائی کمان ٹربل شوٹر کی شناخت رکھنے والے غلام نبی آزاد کو تلنگانہ روانہ کرنے پر سرگرم مشاورت کررہی ہے ۔ غلام نبی آزاد کی تلنگانہ کے کانگریس قائدین پر مضبوط پکڑ ہے ۔ آج بھی کئی قائدین ان سے رابطے میں ہیں اور مسائل کو ان کے ذریعہ ہائی کمان تک پہونچا رہے ہیں جو قائدین کانگریس چھوڑ کر گئے ہیں انہیں دوبارہ واپس لانے اور مختلف سیاسی جماعتوں کے قائدین جو کانگریس میں شامل ہونا چاہتے ہیں پارٹی میں ان کے ناموں پر بھی غور کیا جارہا ہے ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT