Tuesday , December 12 2017
Home / ہندوستان / غلطی سے سرحد عبور کرنے والے پاکستانی کو دیوالی کا تحفہ دے کر واپس بھیج دیا گیا

غلطی سے سرحد عبور کرنے والے پاکستانی کو دیوالی کا تحفہ دے کر واپس بھیج دیا گیا

جموں ۔ /18 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے ایک شہری کو اس کے وطن واپس بھیج دیا گیا جس کو بی ایس ایف نے بین الاقوامی سرحد کے قریب گرفتار کیا تھا ۔ تاہم بعد میں پتہ چلا تھا کہ وہ غلطی سے سرحد عبور کرتے ہوئے ہندوستانی علاقہ میں پہونچ گیا تھا ۔ پاکستان کے علاقہ سیالکوٹ کے موضع پبرور سے تعلق رکھنے والا 22 سالہ علی راجہ جو ایک ٹیلر ہے کل صبح کی اولین ساعتوں کے دوران بی ایس ایف کے مستعد و چوکس اہلکاروں نے اس کو آر ایس پورہ کے سچیت گڈھ سیکٹر میں اس وقت گرفتار کرلیا تھا ۔ جب انہوں نے دیکھا کہ کوئی شخص تاریکی میں سرحد عبور کرتے ہوئے دراندازی کی کوشش کررہا ہے ۔ بی ایس ایف کے ایک عہدیدار نے کہا کہ ’’(اس شخص سے ) پوچھ گچھ کے دوران پتہ چلا کہ اس نے لاعلمی اور غیر ارادی طور پر سرحد عبور کیا تھا ۔ اور انہوں نے اپنے پاکستان ہم منصوبوں سے ہاٹ لائن رابطہ پیدا کرتے ہوئے اس شخص کو گزشتہ شام ان کے حوالہ کردیا ۔اس عہدیدار نے کہا کہ درانداز کو گرفتار کرلیا گیا جو منشیات کے نشہ میں تھا ۔ اس کے قبضہ سے چند پاکستانی کرنسی نوٹ برآمد ہوئے تھے ۔ اس عہدیدار نے کہا کہ ’’سچترا گڈہ میں چنگی پر دونوں ناکوں کے فورسیز کے ذمہ داروں کا اجلاس منعقد ہوا ۔ بعد ازاں اس پاکستانی شہری کو رینجرس کے حوالے کرنے سے قبل دیوالی کے تحفہ کے طور پر مٹھائیاں اور نئے ملبوسات دیئے گئے ۔

TOPPOPULARRECENT