Wednesday , June 20 2018
Home / Top Stories / غیر سماجی عناصر کو بخشا نہیں جائے گا : کے سی آر

غیر سماجی عناصر کو بخشا نہیں جائے گا : کے سی آر

کانگریس ارکان کے خلاف کارروائی حق بجانب،ایوان کے وقار کی برقراری ضروری

حیدرآباد ۔ 13 ۔مارچ (سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے اسمبلی میں دو کانگریسی ارکان کی برطرفی اور 11 ارکان کی معطلی کی پرزور حمایت کی اور کہا کہ یہ فیصلہ سخت ضرور ہے لیکن ناگزیر تھا۔ انہوں نے اسمبلی اور اس کے باہر حالات بگاڑنے کی کوششوں پر سخت انتباہ دیتے ہوئے کہا کہ غیر سماجی عناصر کو سختی سے نمٹا جائے گا ، چاہے وہ کتنے ہی بڑے کیوں نہ ہو اور سیاستدانوں کے بھیس میں کیوں نہ رہیں۔ کانگریسی ارکان کو مارشلس کے ذریعہ ایوان سے باہر لے جانے کے بعد چیف منسٹر نے حکومت کے فیصلہ کی مدافعت کی اور کہا کہ ایوان کے وقار کی برقراری کیلئے کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ غیر سماجی عناصر اور گڑبڑ پیدا کرنے والے افراد گزشتہ 4 برسوں سے تلنگانہ میں امن و ضبط کی صورتحال کو بہتر اور قابو میں دیکھتے ہوئے برداشت نہیں کر پارہے ہیں۔ گزشتہ چار سال سے امن و ضبط کی صورتحال بہتر ہے ۔ تمام طبقات کو تحفظ حاصل ہے ۔ امن و امان کے اس ماحول کو دیکھ کر غیر سماجی عناصر برداشت نہیں کر پارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ غیر سماجی عناصر کے ساتھ سختی سے نمٹا جائے گا، چاہے وہ سیاستدانوں کے بھیس میں شرپسندی کی کوشش کیوں نہ کرے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی بھی شخص قانون سے بالاتر نہیں ہے اور ہر کسی کو قانون کے دائرہ میں رہ کر کام کرنا چاہئے ۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ کانگریس پارٹی بوکھلاہٹ کا شکار ہوچکی ہے ۔ گزشتہ چار برسوں میں دو لوک سبھا حلقوں ، بعض اسمبلی حلقوں ، گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن اور مجالس مقامی کے انتخابات ہوئے لیکن کسی میں کانگریس کو کامیابی نہیں ملی اور بعض مقامات پر کانگریسی امیدواروں کی ضمانت ضبط ہوگئی۔ عوام کانگریس پارٹی کو مسترد کر رہے ہیں جس کے نتیجہ میں کانگریس قائدین تحمل کھوچکے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT