Saturday , December 16 2017
Home / Top Stories / غیر معیاری اشیاء کی تشہیر پر اداکاروں کے خلاف سخت کارروائی

غیر معیاری اشیاء کی تشہیر پر اداکاروں کے خلاف سخت کارروائی

صارفین کو گھر بیٹھے شکایت درج کروانے کی سہولت، مرکزی وزیر اغذیہ و اُمور صارفین پاسوان کا اعلان

پٹنہ۔/17مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی حکومت ، مروجہ قانون تحفظ ِ صارفین کی جگہ ایک نئے قانون کے نفاذ پر غور کررہی ہے جس کے تحت اشیائے صارفین کی مناسب جانچ کے بغیرنامی گرامی شخصیتوں کی جانب سے خریدی کی ترغیب ( سیلزپرموشن ) دینے پر50لاکھ روپئے کا جرمانہ اور 5 سال کی سزائے قید ہوسکتی ہے۔ وزیر اغذیہ اور اُمور صارفین رام ولاس پاسوان نے آج میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ کنزیومر پروٹیکشن بل 2016 کا مسودہ پارلیمانی قائمہ کمیشن کو فراہم کردیا گیا ہے اور یہ بل پارلیمنٹ کے آئندہ اجلاس میں پیش کردیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ مروجہ کنزیومر پروٹیکشن ایکٹ 1986 کی جگہ ایک نیا قانون بہت جلد نافذ العمل ہوگا جس میں گنجائش ہوگی کہ اشیائے صارفین کی مناسب جانچ پڑتال کے بغیر تشہیر کرنے پر فلمی اداکاروں اور دیگر ممتاز شخصیتوں کے خلاف سخت کارروائی کی جاسکتی ہے۔ مسٹر رام ولاس پاسوان نے کہا کہ امیتابھ بچن اور سلمان خان جیسے اداکار اشتہارات میں یہ دعویٰ کرتے ہیں کہ یہ اشیاء ( پراڈکٹ ) استعمال کرنے پرنہ صرف بال مضبوط ہوتے ہیں بلکہ گنجا پن بھی دور ہوجاتا ہے جو کہ دروغ گوئی کے مترادف ہے۔ اس طرح کی گمراہ کن تشہیر روکنا چاہیئے۔ اب انہیں تشہیر سے قبل کسی بھی اشیاء کے فوائد کے بارے میں طمانیت حاصل کرلینا ہوگا۔جبکہ نئے قانون کے مطابق اشتہارات میں دھوکہ دہی سے کام لیا گیا تو جرمانہ کی رقم موجودہ 8لاکھ روپئے سے 50لاکھ روپئے اور سزائے قید کی حد میں موجودہ 2سال سے 5سال کردی جائے گی۔ علاوہ ازیں نئے قانون میں یہ سہولت بھی رہے گی کہ غیر معیاری اشیاء کے خلاف گھر بیٹھے شکایت درج کرواسکتے ہیں۔

ضلع اور ریاستی سطح کے تنازعات کی یکسوئی کی عدالتوں میں معاوضہ کی رقم میں بھی اضافہ کیا جائے گا جس کے مطابق ڈسٹرکٹ کورٹ میں موجودہ 20لاکھ سے ایک کروڑ روپئے اور اسٹیٹ کورٹ میں موجودہ ایک کروڑ سے 14کروڑ تک معاوضہ دیا جائے گا۔ مسٹر رام ولاس پاسوان نے ہندوستانی مارکٹ میں چین سے سستی اشیاء کے بہاؤ پر فکر و تردد کا اظہار کیا اور کہا کہ چینی اشیاء کی روک تھام کیلئے سخت اقدامات کئے جائیں گے۔ انہوں نے یہ ریمارک کیا کہ چینی صنعت کار دیوالی کے موقع پر انتہائی سستے لارڈ گنیش اور پاروتی کی مورتیاں بناکر روانہ کرتے ہیں کیا یہ بھگوان چین میں پیدا ہوئے ہیں؟۔ طلائی زیورات کی فروخت میں بے قاعدگیوں کا تذکرہ کرتے ہوئے مرکزی وزیر نے کہا کہ بورڈ آف انڈین اسٹانڈرڈ کو مضبوط اور مزید بااختیار بنایا جائے گا تاکہ دکانات میں 24کیریٹس کے نام سونے کی فروخت کی جانچ کی جاسکے جبکہ درحقیقت یہ کیرٹ سے زائد نہیں ہوتا۔
بہار : قانون شکن افراد کا حکومت سے گٹھ جوڑ: پاسوان
پٹنہ 17 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی وزیر و ایل جے پی لیڈر رام ولاس پاسوان نے آج چیف منسٹر نتیش کمار کے اس بیان کو بکواس قرار دیا کہ ریاست میں قانون کی بالا دستی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ریاست میں قانون کی خلاف ورزیاں کرنے والی وی آئی پیز اور حکومت کے مابین گٹھ جوڑ ہے ۔ ریاست میں حال میں گیا کے مقام پر ایک نوجوان کا مبینہ طور پر جے ڈی یو سے معطل ایم ایل سی منورما دیوی کے فرزند نے محض کار آگے بڑھانے پر قتل کردیا تھا ۔ اس واقعہ کے بعد سے اپوزیشن جماعتیں مسلسل حکومت بہار پر تنقیدیں کر رہی ہیں۔ رام ولاس پاسوان نے ریاست میں لا اینڈ آرڈر کی صورتحال کو سنگین قرار دیتے ہوئے صدر راج نافذ کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔منورما دیوی نے آج خود کو قانون کے حوالے کردیا اس پس منظر میں مسٹر پاسوان نے کہا کہ جو اہم شخصیتیں قانون کی خلاف ورزی کر رہی ہیں ان کو گرفتار نہیں کیا جا رہا ہے بلکہ انہیں خود سپردگی کا موقع دیا جا رہا ہے ۔ ان وی آئی پیز کی حکومت سے گٹھ جوڑ ہے ۔

TOPPOPULARRECENT