Thursday , November 23 2017
Home / Top Stories / غیر موسمی بارش سے فصلوں کو نقصان ‘ حکومت معاوضہ ادا کرے

غیر موسمی بارش سے فصلوں کو نقصان ‘ حکومت معاوضہ ادا کرے

کانگریس قائدین کا جڑچرلہ کے گاووں کا دورہ ۔ اتم کمار ریڈی کی پریس کانفرنس
حیدرآباد 22 اکٹوبر ( آئی این این ) تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر این اتم کمار ریڈی نے آج ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ غیر موسمی بارش سے جن کسانوں کی فصلوں کو نقصان ہوا ہے انہیں معاوضہ ادا کیا جائے ۔ کانگریس قائدین بشمول کل ہند کانگریس کے سکریٹری آر سی کنٹیا ‘ سابق مرکزی وزیر ایس جئے پال ریڈی ‘ ارکان اسمبلی ڈی کے ارونا ‘ جی چنا ریڈی ‘ ومشی چند ریڈی اور اے سمپت کمار کے علاوہ پردیش کانگریس کے نائب صدر ڈاکٹر ملو روی ‘ کسان کانگریس کے صدر نشین کودانڈا ریڈی اور دوسروں نے جڑچرلہ حلقہ اسمبلی کے بالا نگر منڈل میں اودتیال ‘ نندارم اور گنڈیڈ گاووں کا دورہ کیا ۔ ان قائدین نے متاثرہ کسانوں سے بات چیت کی اور کپاس ‘ جوار اور دوسری متاثرہ فصلوں کا معائنہ کیا ۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے اتم کمار ریڈی نے کہا کہ کپاس تقریبا 48 لاکھ ایکڑ اراضیات پر پیدا کی جاتی ہیں تاہم چار لاکھ ایکر اراضیات پر پھیلی کپاس کی فصلوں کو شدید بارش کی وجہ سے نقصان پہونچا ہے ۔ اسی طرح جوار کی پیداوار 12 لاکھ ایکڑ اراضیات پر کی جاتی ہیں انہیں بھی بارش سے نقصان پہونچا ہے ۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ ٹی آر ایس حکومت نے ان نقصانات پر کوئی رد عمل تک ظاہر نہیں کیا ہے جبکہ ساری ریاست میں ہزار ہا کسان اس سے متاثر ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کپاس پر اقل ترین امدادی قیمت کی 4,320 روپئے فی کنٹل کی بجائے کپاس کے کسانوں کو مجبور کیا جا رہا ہے کہ وہ فی کنٹل 2,700 روپئے کی قیمت پر اپنی پیداوار فروخت کردیں۔ اسی طرح جوار کو بھی 1,425 روپئے فی کنٹل کی اقل ترین امدادی قیمت کی بجائے 800 روپئے فی کنٹل کے حساب سے حاصل کیا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ سب کچھ ریاستی حکومت کے عہدیداروں اور درمیانی آدمیوں کی ساز باز سے ہو رہا ہے ۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ کسانوں کو ان کی پیداوار پر اقل ترین امدادی قیمت فراہم کی جانی چاہئے ۔ اتم کمار ریڈی نے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ کپاس کے کسانوں کو فی ایکڑ 25000 روپئے اور جوار کے کسانوں کو فی ایکڑ 10000 روپئے معاوضہ ادا کیا جائے ۔

 

TOPPOPULARRECENT