Friday , November 24 2017
Home / جرائم و حادثات / فرضی فیس بک سے لڑکیوں کا استحصال کرنے والا شخص گرفتار

فرضی فیس بک سے لڑکیوں کا استحصال کرنے والا شخص گرفتار

متاثرہ لڑکی کی والدہ کی شکایت پر ملزم گرفتار و جیل منتقل، پولیس مصروف تحقیقات

حیدرآباد ۔ 11 ستمبر (سیاست نیوز) فرضی فیس بک اکاونٹس کے ذریعہ لڑکیوں کا استحصال کرنے والے ایک شخص کو پولیس سائبر کرائم سائبرآباد نے گرفتار کرلیا۔ فیس بک پر خود کو لڑکی یا خاتون ظاہر کرتے ہوئے گرفتار عبدالماجد مبینہ طور پر انہیں اپنے جال میں پھانس لیا کرتا تھا اور ان سے قسم لیا کرتا تھا کہ وہ آپس کے راز کی باتیں کسی سے شیر نہ کریں پھر ان لڑکیوں اور خواتین کے عریاں تصاویر منگوالیا کرتا تھا جس کے بعد انہیں بلیک میل کرنا اس کی عادت تھی۔ تاہم ماجد کی جانب سے کسی بھی لڑکی کے جنسی استحصال یا پھر رقمی مطالبہ کرتے ہوئے رقم حاصل کرنے کا ثبوت پولیس کو نہیں ملا۔ پولیس اس تعلق سے مصروف تحقیقات ہے۔ انسپکٹر سائبر کرائم سائبرآباد مسٹر محمد ریاض امین نے بنجارہ ہلز کے علاقہ سے 21 سالہ عبدالماجد کو گرفتار کرلیا جو انجینئرنگ سال سوم کا طالب علم بتایا گیا ہے۔ اس شخص نے 17 تا 18 بڑے انٹرنیشنل اسکولس کی کمسن لڑکیوں کو اپنا نشانہ بنایا اور تقریباً 200 لڑکیوں سے یہ تعلقات بنائے ہوئے تھا۔ 18 ماہ سے اس نے فیس بک کے فرضی اکاونٹس کو چلانا شروع کریا۔ لڑکیوں سے لڑکی کے نام پر دوستی فرضی تصویر پر شبہ اور فرضی شناخت کے ذریعہ کمسن لڑکیوں سے عریاں تصاویر حاصل کرلینا اور ان لڑکیوں کے ذاتی اطلاعات کو بھی جھانسے میں ڈال کر حاصل کرلیا کرتا تھا۔ جس کے بعد الگ الگ فون نمبرات سے فون کرتے ہوئے ان لڑکیوں کو ہراساں کیا کرتا تھا کہ وہ ان کے تصاویر کو سوشیل نٹ ورکنگ سائیٹس اور عریاں فحش مواد والے ویب سائیٹ پر ڈال دے گا۔ تصاویر روانہ کرنے سے انکار کرنے والی لڑکیوں کو وہ دھمکیاں دیتا تھا اور اپنے آپ کو اعلیٰ پولیس عہدیدار کی بیوی ظاہر کرتا تھا۔ 7 ستمبر کو ایک لڑکی کی والدہ کی شکایت پر کارروائی کرتے ہوئے پولیس نے اسے گرفتار کرلیا اور عدالتی تحویل میں دے دیا۔

TOPPOPULARRECENT