Friday , July 20 2018
Home / جرائم و حادثات / فرضی لاٹری اسکیم کا شاخسانہ ، 3 رکنی ٹولی گرفتار

فرضی لاٹری اسکیم کا شاخسانہ ، 3 رکنی ٹولی گرفتار

لاکھوں روپئے اور دیگر اشیاء ضبط ، اے سی پی فلک نما کی پریس کانفرنس
حیدرآباد ۔ /21 مارچ (سیاست نیوز) فرضی لاٹری اسکیم چلانے والے تین رکنی دھوکے بازوں کی ٹولی کو شاہ علی بنڈہ پولیس نے گرفتار کرلیا اور ان کے قبضے سے لاکھوں روپئے لاٹری کی رقم اور دیگر اشیاء کو برآمد کرلیا ۔ اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس فلک نما سید فیاض نے بتایا کہ لاڈ بازار کے ساکن محمد غوث خان نے پولیس شاہ علی بنڈہ سے شکایت درج کرواتے ہوئے بتایا کہ خلیل بن عقیل اور محمد اعظم خان ساکن علی باغ کالاپتھر کے جی این انٹرپرائزیس کے نام سے لکی ڈرا اسکیم چلارہے ہیں اور اس کے تحت کئی افراد 12 ماہ کی اسکیم کیلئے ہر ماہ ایک ہزار روپئے فی کس ادا کرنے پر لکی ڈرا میں کار ، رائیل انفیلڈ ، آکٹیوا موٹر سائیکل ، موبائیل فونس ، ایل ای ڈی ٹی وی وغیرہ دینے کا وعدہ کیا تھا ۔ درخواست گزار نے شکایت میں بتایا کہ مذکورہ دھوکے بازوں کے دعوؤں پر یقین کرتے ہوئے کئی افراد نے اس لکی ڈرا اسکیم میں شامل ہوئے لیکن ڈرا کے دوران کئی ارکان کے ٹوکن نمبر موجود نہ ہونے اور دھاندلیاں ہونے کے شبہ پر شاہ علی بنڈہ پولیس سے شکایت درج کروائی گئی ۔ مسٹر فیاض نے بتایا کہ شاہ علی بنڈہ پولیس نے دھوکہ دہی اور منی سرکیولیشن اسکیم ایکٹ کے تحت ایک مقدمہ درج کرتے ہوئے تحقیقات کاآغاز کیا تھا اور شواہد کی بنیاد پر خلیل بن عقیل ، محمد اعظم خان اور محمد نظیر حسین کو گرفتار کرلیا اور ان کے قبضے سے لکی ڈرا میں استعمال کئے جانے والے بروچر ، پمفلیٹ ، رسید بکس اور 11 لاکھ 50 ہزار لاٹری کی رقم برآمد کرلی ۔ فیاض نے بتایا کہ گرفتار دھوکے بازوں کو عدالتی تحویل میں دیدیا گیا ۔

TOPPOPULARRECENT