Wednesday , December 19 2018

فرقہ پرستوں کو سختی سے کچل دیا جائے گا: سدا رامیا

بیدر۔/24ڈسمبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) وزیر اعلیٰ سدرامیا نے یہ یقین دلایا ہے کہ ریاستی حکومت اقلیتوں کے جان و مال کی حفاظت کیلئے ہر ممکن قدم اٹھانے کی پابند ہے۔ ریاست کے امن وامان میں خلل ڈالنے کیلئے کسی بھی حلقہ سے کوشش کو قطعاً برداشت نہیں کیا جائے گا۔ پولیس کو یہ سخت ہدایت دی جاچکی ہے کہ شرپسندوں کی سرکوبی کیلئے وہ پوری طرح مستعد رہے

بیدر۔/24ڈسمبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) وزیر اعلیٰ سدرامیا نے یہ یقین دلایا ہے کہ ریاستی حکومت اقلیتوں کے جان و مال کی حفاظت کیلئے ہر ممکن قدم اٹھانے کی پابند ہے۔ ریاست کے امن وامان میں خلل ڈالنے کیلئے کسی بھی حلقہ سے کوشش کو قطعاً برداشت نہیں کیا جائے گا۔ پولیس کو یہ سخت ہدایت دی جاچکی ہے کہ شرپسندوں کی سرکوبی کیلئے وہ پوری طرح مستعد رہے۔ آئندہ ریاست میں کہیں بھی امن میں خلل ڈالنے کی کوشش نہ ہونے پائے اس کیلئے تمام ضروری قدم اٹھائے جائیں۔ وزیر اعلیٰ سدرامیا نے یہ یقین دہانی وزیر اطلاعات و انفراسٹرکچر و حج جناب روشن بیگ کی قیادت میں جماعت المسلمین گنگولی ہلی کونسل کے نمائندوں پر مشتمل ایک وفد سے بلگام کے سورنا سودھا میں ملاقات کے دوران کرائی۔ اڈپی ضلع کے کنداپور تعلقہ میں آنے والے گنگولی دیہات میں جامع مسجد کی ملکیت والے جامع کامپلکس کی دکانات کو نذرآتش کرنے والے شرپسندوں کوگرفتار کرنے اور ان پر قانونی کارروائی کا مطالبہ کرتے ہوئے اس وفد نے وزیر اعلیٰ سے ملاقات کی۔ وفد نے مطالبہ کیا کہ اوقافی املاک پر تعمیر کی گئی جامع کامپلکس کی عمارت کی از سر نو تعمیر اور دکانداروں کی امداد و بازآداکاری کیلئے حکومت کی طرف سے مناسب معاوضہ دیا جائے۔

معاملہ کی غیر جانبدارانہ طریقہ سے جانچ کرائی جائے۔ وفد نے وزیر اعلیٰ کو بتایا کہ ساحلی علاقوں میں مسلسل فرقہ وارانہ منافرت پھیلانے میں مصروف عناصر کو سختی سے کچلا جائے۔ اس علاقہ میں مختلف مقامات سے آکر اشتعال انگیز تقاریر کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی جائے۔ ممبئی قومی شاہراہ بند کرکے یہاں احتجاج کے نام پر حملے کرنے والے عناصر کے خلاف کارروائی کی جائے۔ وزیر اعلیٰ نے وفد کے تمام مطالبات پر سنجیدگی سے غور کرنے اور ریاست میں کہیں بھی کسی بھی ذریعہ سے اشتعال انگیزی کا موقع فراہم نہ کرنے کا یقین دلایا۔ انہوں نے کہا کہ ساحلی کرناٹک میں اچانک فرقہ وارانہ عناصر کے متحرک ہوجانے کی وجہ سے یہاں امن وامان میں خلل ڈالنے کی جو مبینہ کوششیں کی جارہی ہیں حکومت ان پر گہری نظر رکھی ہوئی ہے۔ اس طرح کوششوں سے عوام میں دہشت پھیلانے والوں کو ہرگز بخشا نہیں جائے گا۔ وفد میں جناب روشن بیگ کی قیادت میں جماعت المسلمین کے صدر محمد ارشاد سکریٹری عبدالحمید، نائب قاضی اور آل انڈیا ملی کونسل کے نمائندہ عبدالباسط، مجاہد، محمد توفیق گنگولی، مسلم فورم کے حسین کوزی بنکرے، سیف الدین، محمد ضمیر شاہ وغیرہ موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT