Monday , September 24 2018
Home / شہر کی خبریں / فروغ فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے ذریعہ تلنگانہ کی ترقی میں اہم رول ادا کرنے کی اپیل

فروغ فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے ذریعہ تلنگانہ کی ترقی میں اہم رول ادا کرنے کی اپیل

تلنگانہ اسٹیٹ آل مائناریٹی ایمپلائز کی دعوت افطار، ڈپٹی ڈائرکٹر قبائیلی بہبود کا خطاب

تلنگانہ اسٹیٹ آل مائناریٹی ایمپلائز کی دعوت افطار، ڈپٹی ڈائرکٹر قبائیلی بہبود کا خطاب
حیدرآباد ۔ 25 جولائی (سیاست نیوز) صدر تلنگانہ اسٹیٹ آل مائناریٹی ایمپلائز ویلفیر اسوسی ایشن مسٹر ایم اے رشید (ڈپٹی ڈائرکٹر محکمہ قبائیلی بہبود) نے مائناریٹی ایمپلائز پر زور دیا کہ وہ آپسی اتحاد و بھائی چارگی اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے ذریعہ ریاست تلنگانہ کی ترقی میں اپنا اہم رول ادا کریں تاکہ مائناریٹی ایمپلائز کے درپیش مختلف مسائل کی عاجلانہ یکسوئی کیلئے حکومت سے مؤثر نمائندگی کی جاسکے۔ آج یہاں ہوٹل گرانڈ پلازا نامپلی میں تلنگانہ اسٹیٹ آل مائناریٹیز ایمپلائز ویلفیر اسوسی ایشن کے زیراہتمام ترتیب دی گئی دعوت افطار کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر ایم اے رشید نے آل میوا کے اغراض و مقاصد پر تفصیلی روشنی ڈالی اور تلنگانہ مائناریٹی ایمپلائز کو درپیش مختلف مسائل کی یکسوئی کیلئے حکومت سے مؤثر نمائندگی کرنے کا تیقن دیا اور کہاکہ گذشتہ ایک طویل عرصہ سے مائناریٹی ایمپلائز علاقائی عصبیت کا شکار رہے ہیں۔ انہوں نے اس موقع پر تمام شرکاء افطار تقریب کا خیرمقدم کیا۔ جناب محمد قمرالدین صدرنشین تلنگانہ اسٹیٹ آل میوا نے تقریب کی صدارت کی اور تمام مائناریٹی ایمپلائز کو قبل از وقت عید رمضان کی مبارکباد دی۔ مسٹر احمد علی کارگذار صدر نے کارروائی چلائی۔ مسٹر غازی الدین جنرل سکریٹری آل میوا نے شکریہ ادا کیا۔ قاری محمد نصیرالدین المنشاوی اور ان کے فرزند کمسن قادری محمد شعیب شرفی نے اپنے مخصوص لحن میں تلاوت کلام پاک کے ذریعہ ایک سماع باندھ دیا۔ افطار پارٹی میں شرکت کرنے والی معزز شخصیتوں میں مسرس ایم جے اکبر، پرنسپل کنزرویٹر آف فاریسٹ، ایم اے وحید، سابق منیجنگ ڈائرکٹر ریاستی اقلیتی مالیاتی کارپوریشن ایم ایس صدیقی ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر آف پولیس قاضی محمد اکرام اللہ ناظم دارالقضاۃ ریاستی وقف بورڈ، محمد شہاب الدین ہاشمی بیورو چیف روزنامہ سیاست، نعیم اللہ شریف، منیرالدین مجاہد، نصراللہ خان سینئر ایڈوکیٹ، ڈاکٹر پرماس، جئی بابو، وینکٹیشم، شہباز احمد خان امجد کے علاوہ مائناریٹی ایمپلائز کی کثیر تعداد شامل تھی۔ مولانا عبدالرحمن حسامی نے دعا کی۔ قاری محمد نصیرالدین المنشاوی نماز مغرب کی امامت کی۔

TOPPOPULARRECENT