Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / فلاحی و ترقیاتی اسکیمات میں تلنگانہ ملک بھر میں سرفہرست

فلاحی و ترقیاتی اسکیمات میں تلنگانہ ملک بھر میں سرفہرست

حکومت کی مقبولیت سے اپوزیشن بوکھلاہٹ کا شکار، جوپلی کرشنا راؤ کا بیان
حیدرآباد۔/15اپریل، ( سیاست نیوز) ریاستی وزیر جوپلی کرشنا راؤ نے حکومت کے خلاف اپوزیشن جماعتوں کی مہم پر شدید ردعمل کا اظہارکیا اور کہا کہ فلاحی اور ترقیاتی اسکیمات میں ٹی آر ایس حکومت ملک بھر میں سرفہرست ہے اور عوام میں حکومت کی بڑھتی مقبولیت سے اپوزیشن بوکھلاہٹ کا شکار ہے۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے جے کرشنا راؤ نے کانگریس پارٹی کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ کانگریس تلنگانہ میں ایک علاقائی جماعت کی طرح سکڑ چکی ہے اور حکومت کے خلاف اس کی مہم سے عوام میں سخت ناراضگی پائی جاتی ہے۔ انہوں نے کہ کہا آئندہ عام انتخابات میں کانگریس کو اپوزیشن کا موقف بھی حاصل نہیں ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے انتخابی وعدوں کی تکمیل میں ریکارڈ قائم کیا ہے۔ تمام اہم انتخابی وعدے مکمل ہوچکے ہیں اور چیف منسٹر نے کئی ایسی اسکیمات کا آغاز کیا ہے جن کا انتخابی منشور میں تذکرہ نہیں تھا۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ پر عوام کو مکمل اعتماد ہے اور آئندہ انتخابات میں ٹی آر ایس کی دوبارہ کامیابی یقینی ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر عوامی مسائل کی یکسوئی پر خصوصی توجہ دے رہے ہیں اور ان کے پیش نظر سنہرے تلنگانہ کی تشکیل کا نشانہ ہے۔ کرشنا راؤ نے کانگریس کے اس دعویٰ کو مضحکہ خیز قرار دیا کہ کانگریس پارٹی کے سبب تلنگانہ ریاست حاصل ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس مرکز میں برسراقتدار ضرور تھی لیکن ٹی آر ایس کی قیادت میں جو عوامی جدوجہد کی گئی اس کے آگے مرکز کو جھکنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ اگر کانگریس پارٹی نے تلنگانہ دیا ہوتا تو انتخابات میں عوام کانگریس کو ووٹ دیتے لیکن ایسا نہیں ہوا۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی نے کبھی بھی عوامی مسائل پر توجہ نہیں دی ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی قیادت میں بے قاعدگیوں سے پاک موافق عوام نظم و نسق فراہم کیا گیا ہے۔ تلنگانہ میں جو ترقیاتی کام شروع کئے گئے ہیں ان سے دیگر ریاستیں مدد حاصل کررہی ہیں۔ ریاستی وزیر نے واضح کیا کہ ٹی آر ایس کبھی بھی انتخابات سے خوفزدہ نہیں رہی۔ سابق میں کے سی آر نے کئی مرتبہ ارکان پارلیمنٹ اور ارکان اسمبلی کو تلنگانہ کیلئے مستعفی کراتے ہوئے دوبارہ انتخابات میں حصہ لیا تھا۔ ضمنی انتخابات میں ٹی آر ایس کو شاندار کامیابی حاصل ہوئی۔ انہوں نے کانگریس قائدین کو مشورہ دیا کہ وہ تنقیدوں کا راستہ ترک کرتے ہوئے حکومت کے اقدامات کا استقبال کریں۔ کرشنا راؤ نے بتایا کہ گھریلو اور صنعتی شعبہ جات کو 24 گھنٹے برقی سربراہ کی جارہی ہے اور اس کے علاوہ مشن کاکتیہ اور مشن بھگیرتا جیسی اسکیمات کا عوام کی جانب سے زبردست استقبال کیا گیا۔ انہوں نے حیرت کا اظہار کیا کہ تلنگانہ کے کانگریس قائدین کو حکومت کے فلاحی اقدامات دکھائی نہیں دے رہے ہیں۔ سیاسی مقصد براری کیلئے حکومت کے خلاف کانگریس بیان بازی کررہی ہے۔ رکن اسمبلی جی بالراجو اور ایم ایل سی کے نارائن ریڈی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کانگریس پارٹی کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ کانگریس آئندہ انتخابات میں اقتدار کا خواب دیکھ رہی ہے۔انہوں نے کانگریس اور دیگر اپوزیشن جماعتوں کو مشورہ دیا کہ وہ ہر کام کی مخالفت کے بجائے حقائق پر مبنی اور تعمیری تجاویز پیش کرے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT