Tuesday , January 23 2018
Home / عرب دنیا / فلسطینی شخص کا اسرائیلوں پر چاقو سے حملہ، تیرہ افراد زخمی

فلسطینی شخص کا اسرائیلوں پر چاقو سے حملہ، تیرہ افراد زخمی

تل ابیب ، 22 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ایک فلسطینی شخص نے اسرائیلی دارالحکومت میں چاقو سے حملہ کرتے ہوئے ایک بس میں سوار تیرہ افراد کو زخمی کر دیا ہے۔ پولیس کے مطابق حملہ آور کا پیچھا کرتے ہوئے اسے گولی ماری گئی اور زخمی حالت میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ اسرائیلی پولیس نے چہارشنبہ کے اس حملے کو ’دہشت گردانہ‘ کارروائی قرار دیا ہے۔ حالیہ عرص

تل ابیب ، 22 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ایک فلسطینی شخص نے اسرائیلی دارالحکومت میں چاقو سے حملہ کرتے ہوئے ایک بس میں سوار تیرہ افراد کو زخمی کر دیا ہے۔ پولیس کے مطابق حملہ آور کا پیچھا کرتے ہوئے اسے گولی ماری گئی اور زخمی حالت میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ اسرائیلی پولیس نے چہارشنبہ کے اس حملے کو ’دہشت گردانہ‘ کارروائی قرار دیا ہے۔ حالیہ عرصے میں اسرائیلیوں پر حملوں میں فلسطینیوں نے چاقوؤں، تیزاب اور گاڑیوں کو ہتھیار کے طور پر استعمال کیا ہے۔ اسرائیلی پولیس کے مطابق 23 سالہ حملہ آور فلسطینی مغربی کنارہ کا متوطن ہے اور اسرائیل میں ورک پرمٹ کے بغیر داخل ہوا تھا۔ حکام کے مطابق حملہ آور دیگر مسافروں کے ساتھ بس میں سفر کر رہا تھا کہ اس نے بس کے ڈرائیور سمیت دیگر افراد پر چاقو سے وار کرنا شروع کردیئے اور بعدازاں وہاں سے فرار ہو گیا۔ اسرائیل کے مطابق چار افراد شدید زخمی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق جیل سروس کے کچھ افسران بھی وہاں قریب ہی موجود تھے، ان میں سے ایک نے بس کو بے قابو ہوتے اور ایک شخص کو بھاگتے دیکھا، جس پر حملہ آور کی ٹانگ پر گولی مارتے ہوئے اسے گرفتار کر لیا گیا۔ پولیس کے ترجمان مکی روزن فیلڈ نے کہا، ’’ہمیں یقین ہے کہ یہ ایک دہشت گردانہ حملہ تھا۔‘‘ پولیس ترجمان کے مطابق چار افراد شدید زخمی ہیں جبکہ دیگر 9 کو معمولی زخم آئے ہیں۔ روزن فیلڈ کے مطابق حملہ آور سے تفتیشی عمل جاری ہے۔ دوسری جانب حماس نے کہا ہے کہ ان کا اس حملے سے کوئی تعلق نہیں ہے لیکن قطر میں حماس کے رہنما عزت الرشق نے ٹوئٹر پیغام میں حملے کی تعریف کرتے ہوئے اسے ’دلیرانہ اقدام‘ قرار دیا ہے۔ عزت الرشق نے کہا، ’’ہمارے لوگوں کے خلاف دہشت گردانہ جرائم اور قبضے کے خلاف یہ قدرتی ردعمل ہے‘‘۔ دوسری جانب مغربی کنارہ میں آباد فلسطینیوں کے گھروں پر بھی یہودی آباد کاروں کے حملوں میں اضافہ ہوا ہے۔ یہودی آباد کاروں کی طرف سے متعدد مرتبہ فلسطینی گھروں کو دیسی ساختہ آتشیں بموں سے نشانہ بنایا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT