Friday , September 21 2018
Home / عرب دنیا / فلسطینی صدر کی طرف سے اقوام متحدہ کے نام اپیل کی تیاری

فلسطینی صدر کی طرف سے اقوام متحدہ کے نام اپیل کی تیاری

رملہ ، 25 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) فلسطینی اتھارٹی کے صدر محمود عباس کی طرف سے کہا گیا ہے کہ وہ بہت جلد بین الاقوامی برادری سے درخواست کریں گے کہ اسرائیل کیلئے مقبوضہ فلسطینی علاقوں کا قبضہ ختم کرنے کیلئے ایک تاریخ مقرر کی جائے۔ محمود عباس حکومت میں شامل ایک اہلکار کے مطابق اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے نام اس اپیل میں کہا جائے گا کہ 1967ء کی مشرق وسطیٰ جنگ کے دوران اسرائیل کی طرف سے قبضہ کیے جانے والے علاقوں کو آزاد کرانے کے علاوہ ایک مکمل طور پر خود مختار فلسطینی ریاست کے قیام کیلئے وقت مقرر کیا جائے۔ فسلطینی صدر کے اس قریبی سرکاری اہلکار کے مطابق محمود عباس اس حوالے سے اپنا مجوزہ منصوبہ غزہ میں جاری جنگ کے بعد عالمی برادری کے سامنے پیش کریں گے۔ تاہم توقع کی جا رہی ہے کہ فلسطینی صدر اپنا یہ مجوزہ منصوبے پہلے فلسطینی رہنماؤں کی منگل 26 اگست کو ہونے والی میٹنگ میں سامنے لائیں گے۔ خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق اس اہلکار نے یہ بات اپنا نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر اس خبر رساں ادارے کو بتائی کیونکہ ابھی تک یہ منصوبہ باقاعدہ طور پر پیش نہیں ہوا۔ اختتام ہفتہ پر ایک مصری ٹیلی وڑن کے ساتھ انٹرویو کے دوران محمود عباس نے بھی کہا تھا کہ وہ بہت جلد ایک منصوبہ عرب، امریکی اور یورپی رہنماؤں کے سامنے پیش کریں گے۔ اس موقع پر ان کا کہنا تھا، ’’یہ ایک غیر روایتی حل ہے لیکن میں اسرائیل کے خلاف جنگ کا اعلان نہیں کروں گا۔ یہ ایک سیاسی اور سفارتی حل ہے۔‘‘ تاہم انہوں نے اس منصوبے کی تفصیلات بتانے سے گریز کیا۔ فلسطینی مغربی کنارے، مشرقی یروشلم اور غزہ پٹی کے علاقے پر مشتمل اپنی ایک خود مختار ریاست کے متمنی ہیں۔ اسرائیل نے ان تینوں علاقوں پر 1967ء کی مڈل ایسٹ جنگ کے دوران قبضہ کر لیا تھا۔ تاہم غزہ پر سے اس نے 2005ء میں اپنا قبضہ ختم کر دیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT